fbpx

طالبان کی حکومت،پی آئی اے پہنچنے کابل والی پہلی بین الاقوامی پروازبن گئی

طالبان کی حکومت،پی آئی اے پہنچنے کابل والی پہلی بین الاقوامی پروازبن گئی

پی آئی اے کی افغانستان میں نئی حکومت کے قیام کے بعد پہلی پرواز کابل پہنچ گئی

پی کے 6249 اسلام آباد سے کابل روانہ ہوا اور9 بجکر45 منٹ پرپہنچا کابل ائیرپورٹ پر افغان سول ایوایشن اور مقامی پی آئی اے عملے کے خصوصی انتظامات سامنے آئے،افغانستان میں پاکستانی سفیر منصور احمد خان اور دیگر سفارتی عملے کی کاوشیں بھی شامل ہیں تربیت یافتہ ائیرپورٹ عملے نے ڈیوٹی جوائن کرکے پرواز ہینڈل کی

سی ای او پی آئی اے ارشد ملک کا کہنا ہے کہ پرواز کا مقصد پاکستان اور افغانستان میں خیر سگالی کو فروغ دینا ہے،پی آئی اے اور پوری دنیا کیلئے یہ آپریشن بہت اہم ہے سب ہماری طرف دیکھ رہے ہیں رابطے بحال کیے جائیں،پی آئی اے کی پرواز کے‌ذریعے بین الاقوامی صحافیوں کو کابل پہنچایا گیا، عالمی بینک، غیرملکی میڈیا ٹیم کو واپس لایا گیا

پی آئی اے نے افغانستان سے غیر ملکیوں کو نکالنے کے لئے بھی خصوصی آپریشن جاری رکھا، پی آئی اے نے غیر ملکی شہریوں کو کابل سے پاکستان منتقل کیا ہے،افغانستان میں پاکستان کے سفیرمنصوراحمد خان کا کہنا تھا کہ کابل میں پاکستان کا سفارت خانہ نہ صرف افغانی بلکہ دیگرغیرملکی شہریوں کے انخلا کیلئے جامع کردارادا کررہا ہے۔

دوسری جانب قطری حکام نے کابل ایئر پورٹ سے بین الاقوامی پروازوں کے آغاز کا اعلان کر دیا ہے، حکام نے کہا ‏کہ کابل ایئر پورٹ سے بین الاقوامی پروازوں کا سلسلہ دوبارہ شروع ہو رہا ہے،

طیارہ حادثہ، رپورٹ منظر عام پر آ گئی، وہی ہوا جس کا ڈر تھا، سنئے مبشر لقمان کی زبانی اہم انکشاف

جنید جمشید سمیت 1099 لوگوں کی موت کا ذمہ دار کون؟ مبشر لقمان نے ثبوتوں کے ساتھ بھانڈا پھوڑ دیا

اے ٹی سی کی وائس ریکارڈنگ لیک،مگر کیسے؟ پائلٹ کے خلاف ایف آئی آر کیوں نہیں کاٹی؟ مبشر لقمان نے اٹھائے اہم سوالات

اگرکوئی پائلٹ جعلی ڈگری پر بھرتی ہوا ہے تو سی اے اے اس کی ذمے دارہے،پلوشہ خان

بین الاقوامی فیڈریشن آف پائلٹس اینڈ ائیرٹریفک کنڑولرز طیارہ حادثہ کے ذمہ داروں کو بچانے میدان میں آ گئی

شہباز گل پالپا پر برس پڑے،کہا جب غلطی پکڑی جاتی ہے تو یونین آ جاتی ہے بچانے

پی آئی اے کے ہوٹل روزویلٹ کے مالکانہ حقوق کس کے پاس ہیں؟ اسمبلی میں اہم انکشاف

Facebook Notice for EU! You need to login to view and post FB Comments!