fbpx

وادی پنجشیروالےافغان طالبان کا حسن اخلاق دیکھ کر خوش ہوگئے

کابل :وادی پنجشیروالےافغان طالبان کا حسن اخلاق دیکھ کر خوش ہوگئے،اطلاعات کے مطابق افغان طالبان نے حسن اخلاق کی اعلی مثال قائم کر دی، پنجشیر کا کنٹرول سنبھالنے کے بعد طالبان کا عوام کیلئے عام معافی کا اعلان کرکے وہاں کے عوام کے دل جیت لئے

طالبان نے پنجشیر میں مقامی ملیشیا کے لیے لڑنے والوں کو سرنڈر کرنے پر نہ صرف معاف کرکے رہا کر دیا بلکہ ہر کسی کو گھر جانے کے لیے 5 ہزار افغانی بھی دیے۔اس حوالے سے افغان میڈیا کی جانب سے ایک ویڈیو بھی سوشل میڈیا پر شیئر کی گئی ہے، جس میں طالبان کو سرنڈر کرنے والے جنگجوؤں میں رقم تقسیم کرتے ہوئے دیکھا جا سکتا ہے۔

 

 

دوسری جانب افغانستان کے صوبے پنجشیر پر طالبان کے قبضے کے بعد قومی مزاحمتی محاذ کے سربراہ احمد مسعود نے ایک بیان میں کہا ہے کہ انھوں نے مقامی علما کے کہنے پر جنگ روکی ہے۔

سوشل میڈیا پر جاری ایک آڈیو بیان میں روس کے خلاف لڑنے والے افغان رہنما احمد شاہ مسعود کے بیٹے احمد مسعود نے کہا کہ پنجشیر میں مزاحمتی اتحاد نے مقامی علما کے کہنے پر جنگ روکی تھی،

لیکن طالبان جنگجوؤں نے وعدے کی خلاف ورزی کی اور جنگ جاری رکھی۔انھوں نے کہا کہ اتوار کو طالبان کے ساتھ لڑائی میں میرے خاندان کے کچھ لوگ بھی ہلاک ہوئے، اس وقت بھی مزاحتمی فوجیں تاحال پنج شیر کے اسٹریٹجک حصے میں موجود ہیں۔

Facebook Notice for EU! You need to login to view and post FB Comments!