fbpx

گھارو میں گرلز سکول کی بلڈنگ کی چھت مکمل گر گئی، طلباء و طالبات زمین پر بیٹھ کر تعلیم حاصل کرنے پر مجبور

باغی ٹی وی ،ٹھٹھہ (خصوصیرپورٹ)حکومت سندھ تعلیم سے متعلق دعوے تو بہت کرتی ہے مگر ضلع ٹھٹھہ میں درجنوں سکولوں میں سہولیات کا فقدان ہے ، ٹھٹھہ ضلع کے پمپ ہائوس کالونی گھارو میں گرلز ہائی اسکول کی بلڈنگ کی چھت مکمل گر گئی، طلباء و طالبات زمین پر بیٹھ کر تعلیم حاصل کرنے پر مجبور ہیں حکومت سندھ اور محکمہ تعلیم سندھ ہمیشہ یہ دعویٰ کرتے ہیں کہ دیگر صوبوں کی نسبت سندھ کا تعلیمی نظام بہتر ہے لیکن ضلع ٹھٹھہ کے درجنوں سکولوں کا انفراسٹرکچر تباہ ہو چکا ہے، ٹھٹھہ کے پسماندہ علاقے پمپ ہاوس کالونی گھارو میں قائم گرز ہائی اسکول کی چھت مکمل گر چکی ہے 100 سے زائد بچیاں کھلے آسمان تلے تعلیم حاصل کرنے پر مجبور ہیں، سکول کی ٹیچرز کا کہنا ہے کہ ہم نے کئی بار محکمہ تعلیم کے اعلی حکام کولیٹر لکھے ہیں اس سکول کی حالت زار اور ممکنہ کسی حادثہ پرتوجہ دلانے کی کوشش کی ہے لیکن ہماری کوئی سننے کو تیار نہیں ہے ،ہم معصوم بچیوں کو کھلے آسمان تلے بیٹھا کر تعلیم دینے پر مجبور ہیں،مزید دیکھئے ٹھٹھہ سے ہمارے نمائندے کی یہ رپورٹ