fbpx

گجرات، سفاک بیٹوں نے دوسری شادی کی خواہش پر باپ کا سر تن سے جدا کرکے لاش پھینک دی

گجرات :سفاک بیٹوں نے دوسری شادی کی خواہش پر باپ کو بےدردی سے قتل کر دیا۔میڈیا مطابق گجرات کے علاقے کلیوال سیداں میں انتہائی افسوسناک واقعہ پیش آیا جہاں ایک شخص کو بےدردی سے قتل کر دیا گیا۔مذکورہ شخص کی سر کٹی لاش ملی تھی، پولیس نے تحقیقات میں انکشاف کیا تھا کہ مقتول کو اس کے سگے بیٹوں نے قتل کیا تھا او لاش سڑکنارے پھینک کر روپوش ہو گئے تھے تاہم پولیس نے ملزمان کو گرفتار کر لیا۔مقتول کی لاش 4 جون کو ملی تھی جسے بے دردی سے قتل کرکے سڑک کنارے پھینک دیا گیا تھا،بعدازاں مقتول کی شناخت غلام سرور کے نام سے ہوئی،

اطلاعات ہیں کہ پولیس نے لاش کو تحویل میں لے کر تحقیقات کا آغاز کیا تو مقتول کے اہلخانہ غائب تھے جس پر پولیس نے اُن کی گرفتاری کے لیے ٹیمیں تشکیل دیں۔حکام کے مطابق مقتول غلام سرور کے دو بیٹوں اور بیوی کو شیخوپورہ سے گرفتار کیا گیا۔ملزم نے تفتیش کے دوران انکشاف کیا کہ انہوں نے خود اپنے والد کو قتل کیا اور اس قدر بےدردی سے مارا کہ اس کا سر ہی جسم سے جدا کر دیا۔ملزمان نے مزید کہا کہ والد دوسری شادی کرنا چاہتا تھا جس پر والدہ نے طیش دلایا اور ہم نے سفاکانہ واردات کی۔

ملزمان نے والد کا سسر کاٹ کر لاش گجرات کے نواحی گاؤں میں پھینکی تھی تاکہ لاش کو لاوارث سمجھ کر تحقیقات نہ کی جائیں۔پولیس نے ملزمان غلام حیدر ، ارسلان حیدر اور نجمہ کوثر کو آلہ قتل سمیت گرفتار کیا۔پولیس کے مطابق ملزمان مرید کے کے رہائشی ہیں۔اور ان کے خلاف مقدمہ درج کرکے مزید تحقیقات کا آغاز کر دیا گیا ہے۔دوسری جانب نارروال میں انتہائی افسوسناک واقعہ پیش آیا ہے جہاں پر تھانہ ندو کے گاؤں بڈھا ڈھولہ میں داماد کی فائرنگ سے سسر قتل ہو گیا۔

ذرائع کے مطابق ٹوبہ ٹیک سنگھ کا رہائشی عرفان ناراض بیوی کو لینے بڈھا ڈھولہ گاؤں آیا ہوا تھا۔تلخ کلامی ہونے پر اس نے فائرنگ کر دی جس کی زد میں آ کر اس کا سسر صادق موقع پر دم توڑ گیا۔واقعے میں اس کی ساس جمیلہ بی بی، گاؤں کا ایک شخص علی اور نامعلوم زخمی ہو گئے،جھگڑے کے دوران اہلخانہ کے تشدد سے عرفان نھی شدید زخمی ہوا۔عرفان اسپتال میں زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے دم توڑ گیا دوسری جانب تھانہ سہالہ پولیس نے 35 سالہ طاہرہ یاسمین کے اندھے قتل میں ملوث درندہ صفت ملزم گرفتار کر لیا ۔