ووٹ کو عزت دو کے نعرے لگانے والے نوٹوں کی عزت کرتے ہیں، فردوس عاشق اعوان

ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان کا حکومت کا زرعی شعبے میں انقلاب لانے کت حوالے سے کہا کہ پنجاب بڑا بھائ ہونے کے ناطے قائدانہ کردار ادا کرتا ہے-مجودہ حکومت نے زرعی شعبے میں انقلاب لانے کے لیے ڈیجیٹللائز پالیسی تشکیل دی گئ ہے- وزیراعظم کے وئژن کے تحت محنت کر کے سابقہ دور کی شوبازیوں کا ملیہ میٹ کیا ہے اور کسانوں کے حقوق کے لیے عملی اقدامات کیے گئے ہیں-

اس سے قبل زرعی زمینوں کو ہاوسنگ سوسائٹیز میں تبدیل کر کے کنکریٹ میں تبدیل کر دیا جاتا تھا- پنجاب میں پہلی زرعی پالیسی کا سہراموجودہ حکومت کے سر جاتا ہے- اٹھتر ہزار سے زائد ایکڑ بنجر زمین کا قابل کاشت بنایا ہے گیا ہے- پانچ لاکھ انتالیس ہزار سے زائد کسانوں کی فصلوں کی انشورنس کی گئ ہے-سرکاری ملازمین کا احتجاج جاری ہے اپنے حقوق کی جنگ لڑنے والوں کو پیغام دینا چاہتی ہوں کہ سرکار کا حسن اسکا ملازم ہے- سرکار اور سرکاری ملازم لازم ملزوم ہیں- وزیراعظم اور وزیراعلی آپکے جائز مطالبات کے پاسدار ہے- سول گریڈ تک جو ملازمین کے ساتھ کمٹمنٹ کو سترہ سے بائیس گریڈ کے بابوں نے ہائ جیک کر لیا ہے- ہمیں معلوم ہے مسائل کے تحت تنخواہ نہیں بڑھی ہمیں آپکا احساس ہے – اس طرح اگر آپ سڑکوں پر آجائیں گے تو اپ اپوِزیشن کے لیے ایندھن بن جائیں گے-

اپوزیشن اور پی ڈی ایم جو عوان کا مسترد شدہ اپنے ایجنڈے کی بھینٹ نہ چڑھ جائیں- ہم جانتے ہیں آپکے بغیر ملک نہیں چل سکتا عوام کے مسائل کو نہ بڑھائیں – عوام کی مشکلات کو نہ بڑھائیں مل بیٹھ کر معاملات طے کریں- پی ڈی ایم کا نظر بٹو کہتا ہے مجھ سے سیاست کی شاگردی لیں- کیسی استادی ہے آپ دو سیاسی نابالغ کے کندھو پر بیٹھ کر ایوان میں جانا چاہتے ہیں- کیا سیاسی نااہل وزیراعظم شفاف طریقے سے تمام انتخابات کے میکنزم کو یقینی بنانا چاہتے ہیں- جو ووٹ کو عزت دو کا نعرہ لگاتے تھے وہ اوپن بیلٹنگ کی مخالفت کر کے نوٹ کی عزت کر رہے ہیں- تمام سیاسی یتم عمران خان کے ہم پلہ نہیں ہے عمران خان کو چیلنج نہ کریں عمران خان نے ایک ہی پتخے سے آپکو زمیں بوس کیا ہے- عوام نسل در نسل غلامی سے نجات چاہتی ہے اپوزیشن مردہ سیاست کو زندہ کرنا چاہتی ہے-عمران خان انکے ہاتھوں سے بلیک میل نہیں ہوگا-

حسین جہانیاں گردیزی کہتے ہیں کہ ماضی کی حکومتیں زبانی طور پر زراعت کو ترجیح دیتی رہی لیکن عملی اقدام نہیں کیا گیا- وزیراعظم دلچسپی لیتے ہیں زراعت میں اور زرعی شعبے کی ترقی کی مانیٹرنگ کر رہے ہیں- میری وزارت بھی اس لیے بدلی گئ کہ زراعت میں بہترین کام کیا جا سکے- وزیراعظم نے تین سو ارب کا زراعت کا پیکج دیا تھا- چار میجر فصلوں کی پیداوار بڑھانے کے لیے پیسے خرچ کیے جا رہے ہیں- ان فصلوں میں گنا گندم چاول اور تیل والی اجناس پر کام جاری ہے- سورج مکھی لگانے والے کسان کو پانچ ہزار فی ایکڑ سبسڈی دی جا رہی ہے- کھادوں اور بیجوں پر سبسڈی دی جا رہی ہے تاکہ پیداوار کو بڑھایا جا سکے- ہندوستان نے عالمی عدالت میں باسمتی چاول کی ملیکت کے لیے کیس کیا تھا- وزیراعظم کی ہدائت پر اس دعوے کو چیلنج کیا گیا ہے امید ہے ہم اس میں کامیاب ہونگے – وزیراعظم کے پیکج کے تحت کاشتکاروں میں مشینری تقسیم کی جا رہی ہے – بارہ سو لیزر مشینیں تقسیم کی جاچکی ہے- زرعی مشینری کو امپورٹ کرنے کے لیے ٹیکس کم کیا جائے اور زرعی قرضہ کے شرائط آسان بنائیں گے- ہمارا کاشتکار آڑھتی کا محتاج ہوتا ہے ہم الیکٹرونک رسیڈ کا سلسلہ شروع کرنے لگے ہیں- اس بار گندم پہلے سے زیادہ کاشت کی گئ ہے- ماضی میں گنے کے کاشتکاروں کا استحصال ہوتا رہا ہے- سینیٹ کی افادیت کے تحت ہر شخص سمجھتا ہے کہ وفاق کی اکئیوں کو اکٹھا کرنے ولا ادارہ سینیٹ ہے- ماضی میں مال و دولت والے لوگوں نے خود کا تعارف کروانے کے لیے پیسہ استعمال کیا- نوٹوں والے لوگوں نے سینیٹ کا رخ کیا پہلی دفعہ پی ٹی آئ نے عام آدمی کو سینیٹ میں بٹھایا-

عمران خان اکیلا اس طریقے کو نہیں بدل سکتا آئینی ترامینم اسکا واحد حل ہے سپریمم کورٹ ستے درخواست ہے ہماری رہنمائ کرے نوٹوں کی خریدو فروخت والوں کو کیسے روکا جائے کے پی حکومت نے وڈیو پر تحقیقاتی کمیشن بنایا ہے کردار اگر وڈیو کے مطابق ممثالت رکھتے ہیں تو کوئ بھی قانون سے بالا تر نہیں- وزیراعظم نے وڈیو میں آنے والے وزیر سے استعفی لے کر گھر بھیجاّ- وزیراعظم کو وڈیو کا بتایا گیا تھا لیکن وزیراعظم نے وڈیو اب دیکھی ہ- عدالتیں آئین اور قانون کے دباو میں ہوتی ہیں کسی شخصیات کے دباو میں نہیں- ہم نے کالی بھڑوں کا بے نقاب کیا ہے چھپایا نہیں ہے جس نے جو بویا ہے وہ کاٹے گا- ڈی جی آئ ایس پی آر نے اہنے موقف میں خود احاطہ کیا ہے – بریف کیس سیاست کی نفی ہمارا عزم ہے اسکے بانی لندن مین بولیاں لگانے کے لیے انڈر نائینٹین کو چھوڑ گئے ہیں- اگر شفاف میکنزم نہ بنایا گیا تو اپوزیشن کو چہیے حکومت کے ساتھ کھڑے ہوکر چور دروازے کو روکا جا سکے

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.