توہین عدالت کیس، ڈی سی اسلام آباد عدالت پیش

0
147
islamabad highcourt

اسلام آباد ہائیکورٹ،ڈی سی اسلام آباد کے خلاف توہین عدالت کیس کی سماعت ہوئی

اسلام آباد ہائی کورٹ کے جسٹس بابر ستار نے کیس کی سماعت کی،ڈی سی اسلام آباد عرفان نواز میمن اسلام آباد ہائی کورٹ میں پیش ہو گئے،ڈی سی اسلام آباد عرفان نواز میمن نےاس موقع پر عدالت میں بیان دیا کہ اس کیس میں 18 سماعتیں ہوئیں، کسی سماعت میں غیر حاضر نہیں ہوا، اپنے آپ کو اس عدالت کے رحم و کرم پر چھوڑتا ہوں،جسٹس بابر ستار نے ان کی سرزنش کرتے ہوئے کہا کہ کیا آپ سمجھتے ہیں کہ یہ مذاق ہے، آپ کے خلاف توہینِ عدالت چل رہی ہے، آپ نے 970 دنوں کے لیے 69 ایم پی او آرڈر جاری کیے، کیا ان کے بچے نہیں تھے، انہیں عمرے پر نہیں جانا تھا؟ ہم نے شوکاز نوٹس جاری کیا ہے، پیر تک جواب دیں،ر ڈی سی اسلام آباد کے وکیل راجہ رضوان عباسی نے جسٹس بابر ستار سے کہا کہ آپ غصے میں ہیں، اس کیس کی کچھ دیر بعد سماعت کر لیں۔

جسٹس بابر ستار نے ڈی سی اسلام آباد سے کہا کہ یہ کیس کل مکمل ہو جانا تھا، آپ کی وجہ سے نہیں ہو سکا، مسٹر میمن کیا آپ کو عدالت کا آرڈر معلوم نہیں تھا؟ڈی سی اسلام آباد عرفان نواز میمن نے جواب دیا کہ میں عدالتی حکم عدولی کا سوچ بھی نہیں سکتا۔جسٹس بابر ستار نے ان سے استفسار کیا کہ اب آپ کی مرضی سے بینچ بنیں گے؟اس موقع پر ڈی سی اسلام آباد کے وکیل راجہ رضوان عباسی نے ان پر عائد فردِ جرم کا متن پڑھ کر سنایا اور دلائل دیتے ہوئے کہا کہ توہینِ عدالت تین طرح کی ہوتی ہے، سول، کریمنل اور جوڈیشل، انصاف کی راہ میں رکاوٹ پر توہینِ عدالت کی یہ کارروائی شروع کی گئی، میری استدعا ہے کہ یہ کیس توہینِ عدالت کی سیکشن 6 پر پورا نہیں اترتا، عدالتی حکم پر تھری ایم پی او کا آرڈر کالعدم قرار دے دیا گیا تھا، بعد میں نیا ایم پی او آرڈر جاری کیا گیا، دوسرا ایم پی او آرڈر ڈسٹرکٹ مجسٹریٹ راولپنڈی کی جانب سے جاری ہوا، اگر توہینِ عدالت ہوئی تو ڈی سی اسلام آباد نے نہیں، ڈی سی راولپنڈی نے کی، میں کسی کو نہیں مروانا چاہتا، صرف یہ کہہ رہا ہوں کہ اگر توہینِ عدالت ہوئی تو ڈی سی راولپنڈی نے کی، عدالت کو تمام صورتِ حال دیکھنا ہو گی، 5 اگست کو شہریار آفریدی کے پارٹی لیڈر گرفتار ہوئے، 9 مئی کی صورتِ حال بھی سب کے سامنے ہے، اسلام آباد میں امن و امان کی صورتِ حال اور ایجی ٹیشن پر انٹیلی جنس بیورو نے آگاہ کیا، ڈسٹرکٹ انٹیلی جنس کمیٹی میں تمام حساس اداروں کے نمائندے شامل تھے، اس کمیٹی نے اسلام آباد میں حکومتی عمارتوں اور ایف نائن پارک کے پاس جی ایچ کیو چوک پر حملوں کا خدشہ ظاہر کیا تھا۔

ڈی سی اسلام آباد کیخلاف توہین عدالت کیس کا فیصلہ محفوظ،بیرون ملک جانے سے روک دیا گیا
اسلام آباد ہائی کورٹ نے توہینِ عدالت کیس کسی اور بینچ کو منتقل کرنے کی استدعا مسترد کر دی اور ڈی سی اسلام آباد کے وکیل کو مزید دلائل دینے کی ہدایت کر دی،ڈی سی اسلام آباد اور پولیس افسران کیخلاف توہین عدالت کیس کا فیصلہ محفوظ کر لیا گیا، فیصلہ یکم مارچ کو سنایا جائے گا،اسلام آباد ہائیکورٹ نے ڈی سی اسلام آباد کی غیر مشروط معافی کی استدعا مسترد کردی،عدالت نے ڈی سی اسلام آباد کو شوکاز نوٹس کا پیر تک جواب جمع کرانے کا حکم دیتے ہوئے بیرون ملک جانے سے روک دیا

خاور مانیکا انٹرویو اور شاہ زیب خانزادہ کا کردار،مبشر لقمان نے اندرونی کہانی کھول دی

ریحام خان جب تک عمران خان کی بیوی تھی تو قوم کی ماں تھیں

خاور مانیکا کے انٹرویو پر نواز شریف کا ردعمل

بشریٰ بی بی کی سڑک پر دوڑیں، مکافات عمل،نواز شریف کی نئی ضد، الیکشن ہونگے؟

جعلی رسیدیں، ضمانت کیس، بشریٰ بی بی آج عدالت پیش نہ ہوئیں

عمران خان، بشریٰ بی بی نے جان بوجھ کر غیر شرعی نکاح پڑھوایا،مفتی سعید کا بیان قلمبند

Leave a reply