fbpx

دو دن سے مری میں ٹریفک جام :وزیر اعلی پنجاب نے نوٹس لے لیا

مری :دو دن سے مری میں ٹریفک جام :وزیر اعلی پنجاب نے نوٹس لے لیا،اطلاعات کے مطابق عید کے دوسرے روز بھی ملکہ کوہسار مری میں سیاحوں کی آمد کا سلسلہ جاری ہے۔ رش کی وجہ سے ٹریفک سست روی کا شکار ہے، اور گاڑیوں کی لمبی قطاریں لگ گئیں ہیں۔

انتظامیہ کے مطابق اب تک ساڑھے چھے ہزار سے زائد گاڑیاں مری میں داخل ہوچکی ہیں۔

ٹریفک پولیس اور ٹورسٹ پروٹیکشن فورس ٹریفک کنٹرول کرنے میں مصروف ہے جب کہ مری کے تمام داخلی اور خارجی راستوں پر سٹی ٹریفک پولیس بھی موجود ہے۔

انتظامیہ کی جانب سے مری میں داخل ہونے والی گاڑیوں کی مانیٹرنگ کا سلسلہ بھی جاری ہے۔

دوسری جانب وزیر اعلی پنجاب حمزہ شہباز نے مری جانے والے راستوں پر ٹریفک جام ہونے کی خبروں کا نوٹس لیتے ہوئے اسے فوراً بحال کرنے کے احکامات جاری کردیے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں: مری میں سیاحوں کی سہولت کے لیے پنجاب پولیس کا مری ٹورازم پولیس کا آغاز

وزیر اعلی پنجاب نے پولیس اور ضلعی انتظامیہ کو احکامات دیے ہیں کہ وہ ملکہ کوہسار مری میں مقررہ تعداد سے زائد گاڑیوں کے داخلے پر عائد پابندی پر عمل درآمد یقینی بنائیں۔

حمزہ شہباز نے کمشنرراولپنڈی ڈیویژن اور آر پی او پولیس کو ہدایت کی ہے کہ وہ مری جانے والے سیاحوں کو الیکٹرانک اور سوشل میڈیا کے ذریعے بھی رہنمائی فراہم کریں۔

وزیر اعلی نے متعلقہ حکام کو سیوحوں کی سہولت کے لیے کنٹرول روم اور معلوماتی ڈیسک بھی قائم کرنے کا کہا ہے۔

دریں اثناء سی پی او راولپنڈی عمر سعید ملک نے مری کا دورہ کیا اور مختلف مقامات پر سیاحوں کے تحفظ اور سہولت کے لیے کیے گئے انتظامات کا جائزہ لیا۔

اس موقع پر ایس پی کوہسارحیدرعلی اور ایس پی سیکیورٹی فیصل سلیم بھی سی پی او کے ہمراہ تھے۔ سی پی او راولپنڈی نے مری ٹورازم پولیس کے افسران و اہلکاروں سے ملاقات کی اورانہیں سیاحوں کی سہولت، آگاہی اور تحفظ کو ہمہ وقت یقینی بنانے کے حوالے سے ہدایات جاری کیں۔

سی پی اونے افسران و اہلکاروں کو فرائض کی انجام دہی پر ہمہ وقت مستعدی سے عمل پیرا رہنے کی ہدایت بھی دی۔

اس موقع پر میڈیاسے گفتگو میں سی پی او عمر سعید ملک کا کہنا تھا کہ سیاحوں کے تحفظ اور سہولت کے لیے راولپنڈی پولیس تمام وسائل بروئے کار لا رہی ہے، اورمری ٹورازم پولیس کا قیام بھی اسی سلسلے کی ایک کڑی ہے۔