fbpx

ٹرمپ کے گھر پر چھاپے کے دوران "انتہائی خفیہ” دستاویزات ضبط

چھاپہ حساس دفاعی دستاویزات غیر قانونی رکھنے سے متعلق امریکی جاسوسی ایکٹ کی خلاف ورزی کے شبہ میں مارا گیا,ایف بی آئی

سابق امریکی صدر ٹرمپ کے گھر پر چھاپے کے دوران "ٹاپ سیکرٹ” دستاویزات ضبط کر لی گئیں۔

باغی ٹی وی : میڈیا رپورٹس کے مطابق ایف بی آئی نے 11خفیہ دستاویزات قبضے میں لی تھیں ضبط کی گئی جائیداد کی ایک رسید کے مطابق جو وارنٹ کے ساتھ منسلک تھی۔ فائلوں کے ایک گروپ کو "مختلف کلاسیفائیڈ/TS/SCI دستاویزات” کا نشان لگایا گیا تھا، جس میں سرفہرست خفیہ/حساس کمپارٹمنٹ شدہ معلومات کا مخفف شامل ہے۔

"ٹائم ٹریولر” خاتون نے تاریخ کے خطرناک ترین سمندری طوفان کی پیشگوئی کردی

جب کہ عدالت میں جج نے وارنٹ سمیت دیگر مواد کھولا تو بعض دستاویزات پر ٹاپ سیکرٹ درج ہے ، اس کا مطلب یہ ہوا کہ انہیں صرف خصوصی سرکاری دفاتر میں ہونا چاہیے تھا۔

امریکی محکمہ انصاف نے ٹرمپ کے اعتراضات کو مسترد کرتے ہوئے عدالت سے سرچ وارنٹ دکھانے کا کہا تھا ایف بی آئی کا کہنا ہے کہ چھاپہ حساس دفاعی دستاویزات غیر قانونی رکھنے سے متعلق امریکی جاسوسی ایکٹ کی خلاف ورزی کے شبہ میں مارا گیا ۔

قانون کے متن کے مطابق، ایک قانون، جو حکومتی ریکارڈ کو ہٹانے یا تباہ کرنے سے متعلق ہے، اس میں "امریکہ کے تحت کسی بھی عہدے پر فائز رہنے سے نااہل” ہونے کی سزا شامل ہے تین قوانین میں سے کوئی بھی ریاست کے ضابطہ کا عنوان 18، سیکشن 793، 1519 اور 2071 – اس بات پر منحصر نہیں ہے کہ آیا زیر بحث دستاویزات کی درجہ بندی کی گئی تھی۔

دوسری جانب امریکی سیاسی مبصرین نے خبردار کیا ہے کہ امریکا ممکنہ طور پر خانہ جنگی کی طرف بڑھ سکتا ہےامریکی سیاسی مبصرین کا کہنا ہے کہ سابق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کا نفرت انگیز سازشی بیانیہ امریکا میں تشدد اور انتشار کو ہوا دے رہا ہے فلوریڈا میں ٹرمپ کے گھر پر ایف بی آئی کے چھاپے کے بعد اداروں کے خلاف ٹرمپ کے حامیوں نے نفرت انگیز مہم شروع کر دی ہے، سرچ وارنٹ پر دستخط کرنے والے جج کو بھی دھمکیاں دی جا رہی ہیں۔

یاد رہے کہ چند روز قبل ایف بی آئی نے امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے گھر چھاپہ مار کر انتہائی حساس کاغذات حاصل کیے تھے امریکی اخبار واشنگٹن پوسٹ کی رپورٹ کے مطابق ڈونلڈ ٹرمپ کی رہائشگاہ سے جوہری ہتھیاروں سے متعلق اہم کاغذات کی تلاشی کے لیے چھاپہ مارا گیا تھا۔

ٹرمپ کا کہناہے کہ بائیں بازو کے بعض ڈیموکریٹس قانون نافذ کرنے والے اداروں کے ذریعے انہیں نشانہ بنا رہے ہیں۔

قبل ازیں الجزیرہ نے اپنی رپورٹ میں کہا تھا کہ امریکہ میں چند لوگ واضح طور پر سمجھتے ہیں کہ وہ ایک طرح کی خانہ جنگی میں مصروف ہیں نسل پرستانہ اور زینو فوبک دہشت گردی کی ان کی کارروائیوں کا مقصد 2040 کی دہائی تک امریکہ میں سیاہ اور بھورے اکثریتی آبادی کی ممکنہ سیاسی اور اقتصادی طاقت کو روکنا ہے۔

روس اور ایران کے درمیان اسلحے کی تجارت قبول نہیں کی جائے گی،امریکا