fbpx

یوٹیلیٹی اسٹورز پر خود غرضی کی انتہا

قصور
پتوکی میں یوٹیلیٹی سٹورز پر خود غرضی کی انتہا سفارشیوں کو نوازنے لگے مردوخواتین گھنٹوں لائنوں پر لگنے پر مجبور کورونا ایس او پیز کو بھی بھلا دیا گیا

تفصیلات کے مطابق پتوکی شہر میں تمام یوٹیلٹی سٹورز والوں نے خود غرضی کی انتہا کردی صرف سفارشیوں کی بات سننا اور ماننا انکا وطیرہ ہے غریب شہری پریشان کوئی پوچھنے نہیں پتوکی کی غریب عوام رلیف لینے کیلیے رل گئ شہری ایس او پیز کو بھی بھول گئے سماجی فاصلہ نظر انداز کرونا وائرس پھیلنے کا خدشہ
پتوکی شہر کے تمام یوٹیلیٹی سٹورز پر سستی اشیاء خوردونوش کے حصول کیلئے روزہ داروں کی لمبی قطاریں لگ گئیں چینی،آٹا،گھی اور دالوں کے حصول کیلئے مردوخواتین لمبی قطاروں میں گھنٹوں انتظار کرنے پر مجبور ہیں پتوکی شہر کے تمام یوٹیلیٹی سٹورز پر روزہ داروں کی لمبی قطاریں لگوا کر بھول جانے والے سٹورز مالکان کو ایک فون آتا ہے اور بغیر پوچھے باہر سے لوگوں کو ہر چیز مل جاتی ہے رمضان المبارک کے چھٹے روز روزہ دار سستی اشیاء خوردونوش کے حصول کیلئے خوار ہو گئے یوٹیلیٹی سٹور ٹرنک بازار کے باہر مردوخواتین گھنٹوں انتظار کرتے رہے سستی اشیاء کے حصول کیلئے آنے والے شہری کورونا ایس او پیز کو بھول گئے سماجی فاصلے نظر انداز کر دیا گیا کورونا وائرس پھیلنے کا خدشہ پیدا ہورہا ہے شہریوں نے جناح پریس کلب پتوکی کے دفتر کے سامنے احتجاج کرتے ہوئے کہا کہ حکومت پنجاب اور اسنٹسٹ کمشنر اسامہ شہرون نیازی اور ڈی سی قصور سے مطالبہ کیا ہے کہ ان ظالم سٹورز مالکان کا احتساب کیا جائے اور مرد اور خواتین کی الگ الگ لائنیں بنوائی جائیں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.