fbpx

وفاق کا سندھ میں لاک ڈاؤن کے خاتمے کا مطالبہ

وفاق نے سندھ میں نافذ ہونے والے لاک ڈاؤن کو ختم یا پابندیوں میں نظر ثانی کا مطالبہ کردیا۔

وفاق نے سندھ میں لاک ڈاؤن ختم کرنے کا مطالبہ کیا، گورنر سندھ عمران اسماعیل نے صوبائی حکومت کی جانب سے عائد کردہ سخت پابندیوں کی مخالفت کی اور وزیراعلیٰ مراد علی شہا کو شدید تنقید کا نشانہ بنایا۔

اپنے ایک بیان میں انہوں نے کہا کہ ’لاک ڈاؤن کاخواہش مند وہی ہوسکتاہےجو امریکامیں چھٹیاں گزارے‘۔

عمران اسماعیل نے کہا کہ پاکستان کی اٹھتی معیشت کو نہ گرائیں، ایس اوپیزپر عمل درآمد نہ ہونا وزیراعلیٰ سندھ اور صوبائی حکومت کی ناکامی ہے۔

گورنر سندھ نے کہا کہ ’سپریم کورٹ کاحکم ہےصوبہ اکیلے فیصلہ نہیں کرسکتا، لاک ڈاؤن کے نام پر سندھ میں پولیس، اے سی اور ڈی سی گردی ہورہی ہے‘۔

عمران اسماعیل نے صوبائی حکومت کو آڑے ہاتھوں لیتے ہوئے کہا کہ ’سندھ میں ویکسین پھلوں کی طرح فروخت ہو رہی ہے کیونکہ لوگ گھروں پر لگوا رہے ہیں کچھ کو تو ویکسین لگائے بغیر ہی سرٹیفیکٹ بھی مل گئے‘۔

انہوں نے کہا کہ ’لاک ڈاؤن یا مکمل بندش کا فیصلہ پہلا نہیں بلکہ آخری حل ہے، سندھ حکومت پہلے ایس اوپیزپرعمل کرائے اور پھردیگر آپشنز کو دیکھے‘۔