fbpx

وزیراعلی پنجاب کا انتخاب،آصف زرداری کی شجاعت حسین سے دوسری اہم ملاقات،رات گئے تک جوڑ توڑ

ذوالفقارعلی بھٹو کا کارکن ہوں، خرید و فروخت کی سیاست پر یقین نہیں رکھتا. آصف علی زرداری

سابق صدر آصف علی زرداری ایک بار پھر چوہدری شجاعت حسین سے ملاقات کے لیے ان کی رہائش گاہ پہنچ گئے۔ پیپلز پارٹی کے شریک چیئرمین آصف زرداری نے بڑی عقیدت سے چوہدری شجاعت حسین کے کھٹنوں کو ہاتھ لگایا اور ان کی خیریت دریافت کی ، آصف زرداری نے چوہدری شجاعت حسین سے ملک کی سیاسی صورتحال پر تبادلہ خیال کیا اور اہم معاملات پر مشاورت کی اور چوہدری شجاعت حسین کو اعتماد میں لیا.

باغی ٹی وی کے مطابق پیپلزپارٹی کے شریک چیئرمین آصف زرداری پنجاب میں مسلم لیک ن کی حکومت کو بچانے کیلئے بھرپور کوشش کر رہے ہیں اور اس ضمن میں آصف زردای کی سیاسی ملاقاتیں بھی جاری ہیں. پنجاب کی وزارت اعلی کیلئے انتخاب آج ہو گا.

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق آصف زرداری نے وزیر اعلیٰ پنجاب کے الیکشن کے معاملے پر بھی چوہدری شجاعت حسین کے ساتھ تبادلہ خیال کیا.ذرائع کے مطابق پیپلزپارٹی کے شریک چیئرمین اور سابق صدر آصف زرداری پنجاب میں مسلم لیگ ن کی حکومت اور وزیرعلی حمزہ شہباز کی وزارت بچانے کیلئے کوشاں ہیں،آصف زرداری نے چوہدری شجاعت کے گھر ڈیرہ ڈال لیا ہے، آصف زرداری چوہدری شجاعت سے ملاقات کر کے چلے گئے تھے مگر کچھ ہی دیر بعد دوبارہ وایس آگئے اور چوہدری شجاعت کو حمزہ شہباز کی حمایت کیلئے پر آمادہ کرنے کیلئے کوشاں ہیں.

ذرائع کے مطابق آصف زرداری کی چوہدری شجاعت حسین کے ساتھ گزشتہ 24 کھنٹوں کے دوران دوسری اہم ملاقات ہے، چوہدری شجاعت حسین کے ساتھ ملاقات کے بود جب آصف زرداری چوہدری شجاعت کے گھر سے روانہ ہوئے تو وہ گاڑی میں وکٹری کا نشان بناتے ہوئے روانہ ہوئے.

قبل ازیں سابق صدر آصف علی زرداری سے پیپلز پارٹی کی پارلیمانی پارٹی کے ارکان نے ملاقات کی.پارلیمانی لیڈر حسن مرتضی کی قیادت میں ملاقات بلاول ہاؤس میں ہوئی،پارلیمانی پارٹی کے ارکان نے آصف علی زرداری سے وزیر اعلی پنجاب کے انتخابات کے حوالے سے تبادلہ خیال کیا. ملاقات میں متحدہ اپوزیشن کے امیدوار حمزہ شہباز کو بھر پور سپورٹ کرنے کا اعادہ کیا گیا.

آصف علی زرداری کی پارلیمانی پارٹی کے ارکان سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ مسلم لیگ ن کے ساتھ کھڑے ہیں، پیپلز پارٹی، مسلم لیگ ن کی اتحادی ہے اور تمام ذمہ داریوں کو قبول کرتی ہے ،ذوالفقارعلی بھٹو کا کارکن ہوں، خرید و فروخت کی سیاست پر یقین نہیں رکھتا.

آصف علی زرداری نے کہا کہ وزیر اعلی پنجاب کا امیدوار حسن مرتضیٰ ہوتا تو میں پیسے ضرور لگاتا ،حمزہ شہباز کے وزارت اعلی کے امیدوار ہونے پر میں پیسہ کیوں لگاوں؟،ملک اور پنجاب کی سیاسی صورتحال پر مفاہمت کے لیے خود کو پیش کیا ہے،مفاہمت کی سیاست پر یقین رکھتا ہوں اور یہ کرتا رہوں گا ،میں پہلی دفعہ لاہور نہیں آیا، 3 ماہ پہلے اعلان کیا تھا کہ میں پنجاب میں بیٹھ کر سیاست کروں گا،ابھی تو میں نے پنجاب کی ہر تحصیل میں جانا ہے، انہوں نے کہا کہ پیسے کی سیاست کو یکسر مسترد کرتا ہوں،مسلم لیگ ن کے ساتھ ڈٹ کر کھڑے ہیں،حمزہ شہباز کو وزیر اعلی پنجاب منتخب کروانے کے لیے اپنی پوری کوشش کریں گے، چودھری شجاعت حسین کے کہنے پر نواز شریف، شہباز شریف اور مریم نواز کو چوہدری پرویز الہی کو وزیر اعلی نامزد کرنے کے لئے آمادہ کیا،انہوں نے بتایا کہ چودھری پرویز الہی میرے ساتھ کمٹمنٹ کر کے عمران خان سے جا ملے ،مسلم لیگ ن نے پرالہی کو وزیر اعلی بنانے کے حوالے سے اپنی کمٹمنٹ پوری کی، میں کمٹمنٹ پوری کرنے والوں کے ساتھ کھڑا ہوں.