fbpx

عالمی ادارہ صحت کی جانب سے ملنے والے 8 ویگو ڈالے واگزار نہ ہوسکے

عالمی ادارہ صحت کی جانب سے ملنے والے 8 ویگو ڈالے واگزار نہ ہوسکے

محکمہ صحت پرائمری نے بااثر افسران کے آگے گھٹنے ٹیک دیئے ،محکمہ صحت کی انکوائری کمیٹی ایک ڈالا ریکور کرسکی ،محکمہ صحت نے ڈالوں کی چوری پر ایف آئی آر درج کرنے پر غور شروع کر دیا ہے، میڈیا رپورٹس کے مطابق سابق سیکرٹری صحت علی جان اور سابق ڈی جی ہیلتھ ہارون جہانگیر کے پاس تاحال ڈالے موجود ہیں،سابق سپیشل سیکرٹری اجمل بھٹی نے بھی ڈالا واپس نہ کیا -سربراہ ہیئپاٹائٹس کنٹرول پروگرام شاہد مگسی بھی ڈالا دینے سے انکاری ہیں،متعدد افسران نے موبائل نمبر بند کردیئے ہیں جبکہ گھر سے بھی غائب ہیں تمام افسران کو ڈالوں کی واپسی کے پیغام پہنچائے گئے ہیں

کوئی بھوکا نہ سوئے، مودی کے احمد آباد گجرات کے مندروں میں مسلمانوں نے کیا راشن تقسیم

محبت کا ڈرامہ رچا کر لڑکی کی غیر اخلاقی تصاویر بنا کر بلیک میل کرنیوالا گرفتار

جعلی قیدی بن کر جیل میں 3 سال گزارنے والا قیدی عدالت میں پیش

صوبائی وزیر صحت ڈاکٹر اختر ملک کا کہنا ہے کہ ڈالوں کو ہر صورت واپس لیا جائے گا افسران سے غیر قانونی ڈالے استعمال کرنے پر رینٹ چارجز بھی وصول کئے جائیں گے -تمام 9 ویگو ڈالے غیر رجسٹرڈ ہیں ویگو ڈالوں کی ریکوری کے لئے تمام قانونی ضابطے اٹھائے جائیں گے ڈبلیو ایچ او نے بچوں کی ویکیسن اور وبائی امراض کے خاتمے کے لئے ڈالے فراہم کئے تھے