fbpx

دنیا کی عظیم ترین سلطنتیں تحریر علی اصغر خان                      

    
                      
دنیا میں اب تک ٹوٹل 212 سلطنتیں گزر چکی ہیں ان میں سب سے بڑی اور طویل ترین سلطنت سلطنت برطانیہ ہے اور سلطنت برطانیہ ہی وہ ایسی سلطنت ہے جو لمبے عرصے تک عالمی طاقت رہی ایک اندازے کے مطابق 1921 میں یہ عروج کے دور میں 33 ملین مربع کلومیٹر کے رقبے پر پھیلی ہوئی تھی یاد رہے پاکستان کا رقبہ 796096 مربع میل ہے سلطنت برطانیہ میں اس وقت 45 کروڑ اسی لاکھ لوگ آباد تھے یہ اس وقت کی عالمی آبادی کا چالیس فیصد بنتے تھے یہ اتنی وسیع و عریض تھی کہ ایک اندازے کے مطابق سو سال یا اس سے بھی زیادہ وقت سلطنت برطانیہ میں سورج غروب نہیں ہوا تھا کیونکہ یہ اس وقت دنیا کے پانچوں آباد براعظموں میں پھیلی ہوئی تھی سلطنت برطانیہ کا آغاز 1591 میں آئرلینڈ سے ہوا اس سلطنت برطانیہ کے تیزی سے پھیلنے کی ایک وجہ ایسٹ انڈیا کمپنی بھی تھی ایسٹ انڈیا کمپنی کی ابتدا 16 ویں صدی میں ملکہ ایلزبتھ  ون کے دور میں باحیثیت تجارتی کمپنی ہوئی اس کا مقصد بر صغیر کے ساتھ تجارت کرنا تھی  مغل سلطنت کے بعد برصغیر میں میں جو خلا پیدا ہوا اسے ایسٹ انڈیا کمپنی نے پورا کیا اور اس کے بعد 1857 میں برصغیر مکمل طور پر سلطنت برطانیہ کا حصہ بن چکا تھا اس کے بعد اٹھارہ سو اٹھاون میں میں ملکہ وکٹوریہ نے  ایسٹ انڈیا کمپنی کو ایک سو بیس سال بعد ختم کر دیا اور ہندوستان کو باضابطہ طور پر پر سلطنت برطانیہ کی کالونی بنا دیا  اور ملکہ وکٹوریہ قیصر ہند بن گئی ملکہ وکٹوریہ نےبرطانیہ پر 64 سال حکومت کی اور ان کے دور حکومت میں  سلطنت برطانیہ اپنے عروج پر تھی سلطنت برطانیہ کے اثرورسوخ کا اندازہ اس بات سے لگایا جاسکتا ہے کہ جنوبی افریقہ آسٹریلیا امریکہ وغیرہ میں ان کے مقامی لوگوں سے گورو کی تعداد کئی گنا زیادہ ہے جبکہ اس سلطنت سے پہلے ان جگہوں پر گوروں کی تعداد نہ ہونے کے برابر تھی ملکہ وکٹوریہ 22 جنوری 1901 کو انتقال کر گئیں اس کے بعد ایڈورڈ ہفتم  تخت نشین ہوگیا ملکہ وکٹوریا 22 جنوری 1901 سے نو ستمبر 2015 تک سلطنت برطانیہ کی طویل ترین عہد حکومت وقت کے لحاظ سے سرفہرست رہی بعد ازاں 9 ستمبر 2015 کو یہ ریکارڈ ملکہ ایلزبتھ دوم کو حاصل ہوگیا ابتدا کی طرح سلطنت برطانیہ کا زوال بھی آئرلینڈ سے ہی 1922 میں شروع ہوا اس کے بعد 1947 میں برصغیر کا علاقہ پاک و ہند بھی علیحدہ ہو گیا کیونکہ برصغیر پاک و ہند میں بہت زیادہ دہ ظلم و ستم شروع ہوگئے تھے یو آہستہ آہستہ کر کے سلطنت برطانیہ کم ہوتی گئی اس کے بعد ذکر کرتے ہیں مسلمانوں کی مشہور ترین سلطنت سلطنت عثمانیہ جس کو خلافت عثمانیہ بھی کہتے ہیں اس فہرست میں اس کا 24 وا نمبر ہے یہ سلطنت بھی تین براعظموں پر پھیلی ہوئی تھی ان کے علاوہ عظیم سلطنتوں میں خلافت عباسیہ خلافت راشدہ مغلیہ سلطنت سلجوقی سلطنت بیزنٹائن سلطنت ایوبی امیر تیمور کی تیموری سلطنت جس نے پندرہویں صدی میں سلطنت عثمانیہ کو  جب وہ اپنے عروج پر تھی شکست دی اور سلطنت عثمانیہ  کے سلطان کو اپنے قید میں کردیا بعد ازاں ا میر تیمور نے نے عثمانی سلطان کو قتل کر دیا  لیکن اس کے  بعد امیر تیمور سلطنت عثمانیہ کے اوپر حکمرانی نہیں کرنا چاہتا تھا اور وہ واپس اپنی تیموری سلطنت میں لوٹ گیا اس کے تین سال بعد امیر تیمور کا بھی انتقال ہو گیا اس کے علاوہ لاطینی اور قرطبہ خاندان مشہور سلطنتیں شمار ہوتی ہیں جو کہ اپنے رقبے اور حکمرانی کی وجہ سے دنیا میں اپنا ایک خاص مقام رکھتی تھی
Twitter: Ali_AJKPTI