عظمیٰ بخاری کا یاسمین راشد کو ہٹانے کا مطالبہ ،کہا کارکردگی صرف مریضوں کی تعداد بتانے تک محدود

عظمیٰ بخاری کا یاسمین راشد کو ہٹانے کا مطالبہ ،کہا کارکردگی صرف مریضوں کی تعداد بتانے تک محدود

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق مسلم لیگ (ن) پنجاب کی ترجمان عظمیٰ بخاری نے پنجاب میں ڈاکٹروں پر پولیس تشدد کی مذمت کرتے ہوئے صوبائی وزیر صحت ڈاکٹر یاسمین راشد کو ہٹانے کا مطالبہ کیا ہے

عظمیٰ بخاری کا کہنا تھا کہ کورونا لوگوں کی جانیں لے رہا ہے حکومت ڈاکٹروں پر ڈنڈے برسارہی ہے،رونا وائرس والے کرونا سے نہیں لڑ سکتے،نیب نیازی گٹھ جوڑ شہبازشریف کو نوٹسز بھجوانے میں مصروف ہے، جن کو نوٹس جانے چاہیں وہ وزیراعظم ہاوس میں ہیں
نیب اور نیازی قوم،ملک اور معیشت کےلئے سنگین خطرہ بن چکے ہیں ،چیف جسٹس گرینڈ ہیلتھ الائنس پر پولیس تشدد کا نوٹس لیں

عظمیٰ بخاری کا مزید کہنا تھا کہ ڈاکٹرز مسیحا ہوتے ہیں،لیکن افسوس عمران خان کی جماعت کی ڈاکٹر بھی ان کی طرح فاشسٹ سوچ رکھتی ہیں ،یاسمین راشد اپوزیشن میں ینگ ڈاکٹرز کی خالق اور اقتدار میں آنے کے بعد فرعون بن چکی ہیں ،تحریک انصاف نے پانچ سال جو بویا وہی ان کے سامنے آرہا ہے ،گرینڈ ہیلتھ الائنس ایک ہفتے سے حفاظتی کٹس کی فراہمی کا مطالبہ کررہا ہے

عظمیٰ بخاری کا مزید کہنا تھا کہ پنجاب حکومت کورونا کےخلاف جنگ لڑنے والے مسیحاوں پر پولیس سے حملے کروارہی ہے،پوری دنیا میں طبی عملے کی خدمات کو خراج تحسین پیش کیا جا رہا ہے ،لاہور میں پنجاب پولیس کے جواں نہتے ڈاکٹروں کو تشدد کا نشانہ بنارہے ہیں ،محکمہ صحت پنجاب کی کارکردگی صرف کورونا کے مریضوں کی تعداد بتانے تک محدود ہے ،وزیراعلیٰ پنجاب کو خواتین کو راشن بیگ دینے کی تصویریں بنوانے سے کب فرصت ملے گی؟ پنجاب کے وزیر صحت محکمہ صحت پر توجہ دینے کی بجائے گندم کی قیمتیں مقرر کرنے میں مصروف ہے

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.