زمینوں پر ناجائز قبضہ کرنیوالے ہو جائیں خبردار، آئی جی پنجاب کا بڑا حکم آ گیا

0
20

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق آئی جی پنجاب نے زمینوں پر ناجائز قبضہ کرنے والے گروپس اور افراد کے خلاف آپریشن کیلئے فہرستیں تیار کرنے کا حکم دے دیا

آئی جی پنجاب کی جانب سے ہدایت کی گئی ہے کہ صوبہ بھر میں سرکاری اور پرائیویٹ زمینوں پر قبضہ کرنے والے مافیاز اور افراد کی فہرستیں سنٹرل پولیس آفس بھجوائی جائیں۔ آئی جی پنجاب کا کہنا ہے کہ قبضہ مافیاز کی سرپرستی کرنے والے سرکاری یا ریٹائرڈ افسران کے نام بھی فہرست میں شامل کئے جائیں۔

آئی جی پنجاب کا کہنا ہے کہ کھلے عام یا مخفی طور پر اپنے عہدہ و اختیارات سے قبضہ مافیاکی معاونت کرنے والے افسران کے نام بھی فہرست میں شامل کئے جائیں۔ قبضہ گروپس کے نام، کوائف اور دیگر تفصیلات پر مبنی مکمل فہرستیں 28اکتوبر تک سنٹرل پولیس آفس بھجوا دی جائیں۔ قبضہ گروپس کے ماضی کے کریمنل ریکارڈاور قبضے کا طریقہ(کمرشل، رہائشی یا زررعی زمین پر قابض)کی تفصیل بھی فہرست کا حصہ ہو۔

راولپنڈی پولیس قبضہ مافیا کے خلاف کارروائی سے گریزاں

تحریک انصاف کا یوٹرن، نواز شریف کے قریبی ساتھی جو نیب ریڈار پر ہے بڑا عہدہ دے دیا

نیب ترمیمی آرڈیننس 2019 کی مدت ختم، نیب کو پھر مل گئے وسیع اختیارات

علیم خان کی سوسائٹی کیخلاف عدالت میں روزدرخواستیں آرہی ہیں،اسلام آبادہائیکورٹ کے چیف جسٹس کے ریمارکس

علیم خان اتنے بااثرکہ ریاست نے اپنی زمین استعمال کیلئے دے دی؟ اسلام آباد ہائیکورٹ کے ریمارکس

کوئی ایم پی اے ہے یا وزیر؟ قانون سے بالاتر نہیں،علیم خان اراضی قبضہ کیس کی سماعت کے دوران عدالت کے ریمارکس

اسلام آباد پاکستان کا دارالحکومت نہیں تورا بورا ہے،وفاقی ادارے اسٹیٹ ایجنٹ بنے ہوئے ہیں،عدالت کے ریمارکس

تعمیراتی پراجیکٹس کے لیے اسلام آباد ہائیکورٹ کا بڑا حکم،وزیراعظم کے معاون خصوصی کو طلب کر لیا

سرکاری زمین پر ذاتی سڑکیں، کلب اور سوئمنگ پول بن رہا ہے،ملک کو امراء لوٹ کر کھا گئے،عدالت برہم

جتنی ناانصافی اسلام آباد میں ہے اتنی شاید ہی کسی اور جگہ ہو،عدالت

راول ڈیم کے کنارے کمرشل تعمیرات سے متعلق کیس ،اسلام آباد ہائیکورٹ کا بڑا حکم

اسلام آباد میں ریاست کا کہیں وجود ہی نہیں،ایلیٹ پر قانون نافذ نہیں ہوتا ،عدالت کے ریمارکس

اگر کلب کوریگولرائزکر دینگے توجو عام آدمی کا گھربن گیا اس کو کسطرح گرا سکتے ہیں؟ عدالت

گھر غیر قانونی ہے تو کارروائی کریں،عدالت کا اہم شخصیت کی جانب سے سرکاری اراضی پر قبضہ کیس پر حکم

آئی جی پنجاب کا مزید کہنا تھا کہ قبضہ گروپس کے سرکاری افسران کے ساتھ تعلق یا شراکت داری کی تفصیل بھی فہرست میں درج ہونی چاہئیے۔قبضہ گروپس کے بظاہرپیشہ/بزنس،ٹیلی فون نمبرزسمیت تمام ممکنہ تفصیلات کو ریکارڈ میں شامل کیا جائے۔آئی جی پنجاب کی ہدایت پر سی سی پی او لاہور، صوبے کے تمام آرپی اوز اور ایڈیشنل آئی جی سپیشل برانچ کو مراسلہ بھجوا دی اگیا۔

Leave a reply