ضلع ملیر لبیک یا رسول اللہ کے نعروں سے گونج اٹھا، تاجدار ختم نبوت کانفرنس کا انعقاد

ضلع ملیر میں تحریک لبیک پاکستان کے زیراہتمام فقیدالمثال تاجدار ختم نبوت کانفرنس کا انعقاد۔۔

ضلع ملیر لبیک یا رسول اللہ کے نعروں سے گونج اٹھا۔۔

علامہ حافظ خادم حسین رضوی رح کے چہلم کے سلسلے میں کانفرنس میں ہزاروں کی تعداد میں عوامی سمندر امڈ آیا۔۔

تحریک لبیک پاکستان کے مرکزی قائدین کے خطابات۔۔ علامہ خادم حسین رضوی کی خدمات کو خراج تحسین پیش کیا گیا۔

خطاب کے دوران قائدین نے حکومت پاکستان کو علامہ خادم رضوی سے کیے گئے فرانس سے متعلق معاہدے کے مطابق سفیر بے دخل کرنے کا مطالبہ۔

الیکشن پی ایس 88 کے حوالے سے بھی اظہار خیال کیا گیا۔۔اہلیان پی ایس 88 کی جانب سے ٹی ایل پی پر بھرپور اعتماد کا اظہار۔۔

ان شائاللہ پی ایس 88 میں عوام وڈیرہ شاہی اور لسانیت کو شکست دے کر پیغام دے دیں گے کہ پاکستان میں اب صرف نبیﷺ سے وفاداری چلے گی۔ پیر سید ظہیر الحسن شاہ صاحب (مرکزی نائب امیر تحریک لبیک پاکستان)

عوام کو اب فیصلہ کرنا ہوگا کہ وہ مورتیوں پر دودھ ڈالنے والوں کے ساتھ ہیں یا حضورﷺ کے غلاموں کے ساتھ۔
پیر سید ظہیر الحسن شاہ صاحب (مرکزی نائب امیر تحریک لبیک پاکستان)

علامہ خادم حسین رضوی کے مشن کو پایہ تکمیل تک پہنچائیں گے۔۔ ان شائاللہ دین ضرور تخت پر آئے گا۔۔
پیر قاضی محمود اعوان (مرکزی سرپرست اعلیٰ تحریک لبیک پاکستان)

اگر حکومت نے فیض آباد معاہدے سے روگردانی کی تو نتائج بہیانک آ سکتے ہیں۔پیر سید ظہیر الحسن شاہ صاحب (مرکزی نائب امیر تحریک لبیک پاکستان)

اگر حکومت نے اس بار کریک ڈاؤن کی کوشش کی تو کی قیادت اس پر اپنا لائحہ عمل طے کرے گی۔ ڈاکٹر شفیق خان امینی (مرکزی امیر تحریک لبیک پاکستان خیبر پختونخواہ)

مرکزی قائدین کی کال پر ہر لمحہ تیار ہیں۔۔ حکومت کو چاہیے کہ فرانسیسی سفیر کو ڈیڈ لائن سے پہلے ملک بدر کر دے۔۔علامہ رضی حسینی (امیر کراچی تحریک لبیک پاکستان)

کراچی () تحریک لبیک پاکستان کراچی نے ضلع ملیر میں سابقہ جلسوں کے تمام ریکارڈ توڑ دیئے۔

محمدی فٹبال اسٹیڈیم میمن گوٹھ میں ہونے والی تاجدار ختم نبوت کانفرنس بسلسلہ چہلم حضرت علامہ حافظ خادم حسین رضوی رح میں ہزاروں کی تعداد میں عوامی سمندر امڈ آیا۔۔ضلع ملیر لبیک یا رسول اللہ کے نعروں سے گونج اٹھا۔۔ کانفرنس سے تحریک لبیک پاکستان کے مرکزی قائدین کا خطاب۔۔ مرکزی سرپرست اعلی تحریک لبیک پاکستان قاضی محمود اعوان نے کہا کہ علامہ خادم حسین رضوی کے مشن کو پایہ تکمیل تک پہنچائیں گے اور دین ضرور تخت پر آکر رہے گا۔۔اور دنیا میں اسلام اور پاکستان کا پرچم ضرور بلند ہوگا۔۔
مرکزی نائب امیر سید ظہیر الحسن شاہ صاحب نے اپنے خطاب میں حکومت پاکستان کو وارننگ دی کہ اگر حکومت نے معاہدہ فیض آباد سے روگردانی کی تو نتائج بھیانک آسکتے ہیں کیوں کہ یہ رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم کی عزت اور ناموس کا معاملہ ہے اور اس کے لئے ہم اپنی جانیں قربان کر دیں گے۔۔مرکزی امیر کے پی کے ڈاکٹر شفیق امینی نے کہا کہ ہم ہر لمحہ تیار ہیں حکومت کی جانب سے اس بار کریک ڈاؤن کی کوشش ہوئی تو قیادت اپنا لائحہ عمل دے گی۔۔امیر کراچی علامہ رضی حسینی نے کہا کہ ہم قائدین کی ہر کال پر تیار ہے اہلیان کراچی نے آج حکومت کے خلاف ریفرنڈم میں فیصلہ کر دیا کہ ہم کل بھی حضور صلی اللہ علیہ وسلم کی ناموس کے معاملے میں پیچھے نہ تھے اور آئندہ بھی پیچھے نہیں رہیں گے۔۔ حکومت کا فرض ہے کہ ڈیڈ لائن سے پہلے فرانسیسی سفیر کو ملک بدر کر دے۔۔اسی میں حکومت کی بھلائی ہے۔۔علاوہ ازیں کانفرنس سے دیگر قائدین تحریک لبیک پاکستان نے خطاب فرمایا اور مختلف شعبہ ہائے زندگی سیتعلق رکھنے والے افراد نے شرکت کی اور تحریک لبیک پاکستان کی قیادت پر مکمل اعتماد کا اظہار کیا۔۔ کانفرنس میں تحریک لبیک پاکستان کے پارٹی پرچموں کی بہار نظر آئی جبکہ شرکاء کا جذبہ اور جوش و خروش دیدنی تھا۔ کانفرنس کے شرکاء اور کارکنان لبیک یا رسول اللہ تاجدار ختم نبوت زندہ باد کے نعروں سے اپنے لہو گرماتے رہے۔۔واضح رہے کہ تحریک لبیک پاکستان کی جانب سے ضلع ملیر میں یہ اپنی نوعیت کا شاندار جلسہ تھا جس نے سابقہ جلسوں کے تمام ریکارڈ توڑ دیے۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.