fbpx

اداکار بننے کے لئے پیسے چرانے پر والد نے الٹا لٹکا کر پٹائی کی جاوید شیخ

پاکستان شوبز انڈسٹری کے سینئیر اور لیجنڈ اداکار و ہدایتکار اور پروڈیوسر جاوید شیخ کا کہنا ہے کہ اداکار بننے کے لیے والد کے پیسے چرانے پر الٹا لٹکاکر پٹائی ہوئی تھی۔

باغی ٹی وی :اداکار جاوید شیخ نے حال ہی میں نجی ٹی وی چینل کے پروگرام ٹائم آؤٹ ود احسن خان میں شرکت کی جہاں انہوں نے اپنی ذاتی سمیت ان مشکلات اور دلچسپ واقعات کا ذکر کیا جو انہیں فنی کیرئیر شروع کرتے وقت درپیش آئیں-

اداکار جاوید شیخ کا کہنا تھا کہ 12،13 سال کی عمر میں والد صاحب کی جیب سے 100 روپے چرائے تھے جس کے بعد اپنے تین چار دوستوں کے ساتھ اداکار بننے کے لیے لاہور کی ٹرین میں سوار ہوگیا میں بہت خوش تھا گاڑی چلنے والی تھی-

جاوید شیخ نے مزید بتایا کہ والد صاحب کے پیسوں سے ٹرین میں بیٹھ کر 2 روپے کے لڈو کھارہا تھا تاہم بدقسمتی سے والد صاحب کو پتہ چل گیا اور انہوں نے اپنے دوستوں کے ساتھ مل کر مجھے ڈھونڈنا شروع کیا، والد صاحب ڈھونڈتے ڈھونڈتے اسٹیشن تک پہنچے اور مجھے گردن سے دبوچ لیا جس کے بعد گھر میں الٹا لٹکا کر میری پٹائی ہوئی۔

سینئیر اداکار نے بتایا کہ میری پہلی گرل فرینڈ فرنچ خاتون تھی، میری اس سے کراچی میں ملاقات ہوئی لیکن وہ پیرس میں رہتی تھی اور یہاں چھٹیاں گزارنے کے لیے آئی ہوئی تھی-

جاوید شیخ کے مطابق اس وقت میں کچھ نہیں تھا لہذا فرانس گرل فرینڈ سے ملنے جانے کے لیے والد صاحب کی گاڑی بیچی اور ٹکٹ لے کر چلاگیا تھا جس پر مجھے ایک بار پھر والد صاحب نے مارا تھا۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.