fbpx

کرونا کی تیسری لہر، بچے بھی کرونا کا شکار ہونے لگے

کرونا کی تیسری لہر، بچے بھی کرونا کا شکار ہونے لگے
باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق کرونا کی تیسری لہر میں شدت آ چکی ہے، مریضوں اور اموات میں تیزی سے اضافہ ہو رہا ہے

این سی او سی کے مطابق ایک ہی روز میں ایک سے 10 سال کی عمر کے مزید 2 بچے جاں بحق ہو گئے ہیں یکم اپریل سے اب تک کوروناکے باعث 7 بچوں کی اموات ہو چکیں یکم فروری سے اب تک کورونا کے باعث 1 سے 10 سال کی عمر کے 14 بچے جان سے جا چکے کورونا کے باعث اب تک1 سے10 سال تک کے 47 بچے جاں بحق ہو چکے ہٰیں کورونا کی پہلی لہر کے شروع سے 30 جولائی تک 12 بچے کورونا سے جاں بحق ہوئے،یکم اگست 2020 سے رواں سال 31 جنوری تک 21 بچے جاں بحق ہوئے کورونا کی پہلی دو لہر میں مجموعی طور پر 31 جنوری 2021 تک 33 بچے جاں بحق ہوئے ہیں.

بلاول کے تھر پارکر میں رواں برس کتنے بچے جاں بحق ہوئے؟ حکومتی نااہلی کی بدترین مثال

سندھ کے علاقہ تھر پارکر میں غذائی قلت اور وبائی امراض سے بچوں کی اموات کا سلسلہ جاری ہے،

واضح رہے کہ پاکستان میں کرونا کی تیسری لہر جاری ہے، کرونا مریضوں اور اموات میں مسلسل اضافہ ہو رہا ہے گزشتہ 24 گھنٹوں میں کرونا سے مزید 157 اموات ہوئی ہیں- کرونا کے پھیلاؤ کو روکنے کے لئے این سی او سی نے گزشتہ روز پابندیاں نافذ کی ہیں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.