دیوالی کے موقعہ پر بھارتی فوج کا بے بنیاد پروپیگنڈا

بھارتی فوج نے بھارت میں دیوالی کے موقعہ پر اپنے عوام کو بے وقوف بنانے کے لئے یہ شوشہ چھوڑا ہے کہ پاکستان نے فائربندی معاہدے کی خلاف ورزی کرتے ہوئے بھارتی علاقے میں فائرنگ کی جس کے بعد بھارتی فوجوں نے جوابی کارروائی کرتے ہوئے پاکستان کے گیارہ فوجی شہید کر دئیے۔ بھارتی فوج نے صرف اسی پر اکتفا نہیں کیا بلکہ یہ مضحکہ خیزخبر بھی دی کہ شہید ہونے والوں میں پاکستان آرمی سپیشل سروسز گروپ کے دو سے تین کمانڈوز بھی شامل ہیں۔ اس کے ساتھ ساتھ پندرہ سے سولہ پاکستانی فوجی جوان زخمی بھی ہوئے۔ بھارتی فوج نے دعوی کیا کہ پاکستان نے 13 نومبر کو بھارتی مقبوضہ جموں کشمیر میں لائن آف کنٹرول پر اڑی سے گوریز کے علاقے کے درمیان فائرنگ کی جس کا جواب بھارتی فوج نے دیا۔ اس کے ساتھ ساتھ اس مصنوعی اور فرضی واقعہ کی ایک ویڈیو بھی جاری کی گئی جس میں بھارتی فوج نی ایک ویران علاقے میں موجود ایک مکان کو نشانہ بنایا گیا لیکن اس ویڈیو میں جو غلطی کی گئی وہ فوری طور پر ہر خاص و عام نے پکڑ لی۔ مکان تباہ ہونے کی صرف مٹی اور دھول اڑی لیکن وہاں کوئی بھی لاش نظر نہیں آئی۔ اس بھارتی "معرکے”  میں بھارتی فوج نے اسرائیل سے حال ہی میں خریدے گئے جدید ترین سپائیک انٹی ٹینک گائیڈڈ میزائل استعمال کئے جانے کا دعوی کیا۔ بھارتی عوام کو یہ خوشخبری بھی سنائی گئی کہ اس واقعے میں 4 بھارتی فوجی اور 5 بھارتی شہری ہلاک اور 3 فوج زخمی بھی ہو گئے۔ بھارتی فوج نے یہ بے بنیاد واقعہ کی تشہیر پورے بھارتی میڈیا پر کی لیکن بھارت کے کئی دفاعی ماہرین نے اس پر دھیان نہیں دیا اور اسے بھی ماضی میں بھارتی سرجیکل اسٹرائیک کا ری میک قرار دیا۔ 

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.