آئی ٹی کے ذریعے پائیدار ترقی کو یقینی بنانا پی ٹی آئی حکومت کی اولین ترجیح ہے،وفاقی وزیر

‎وفاقی وزیر برائے انفارمیشن ٹکنالوجی اور ٹیلی مواصلات سید امین الحق نے آواری ہوٹل لاہور میں مقامی آئی ٹی انڈسٹری سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ آئی ٹی کے ذریعے پائیدار ترقی کو یقینی بنانا پی ٹی آئی حکومت کی اولین ترجیح ہے۔ وزیر اعظم کے ڈیجیٹل پاکستان کے ویژن کے تحت آئی ٹی وزارت ملازمتوں کے مواقع پیدا کرنے ، معیار زندگی اور مقامی برآمدات میں بہتری ، ہونہار نوجوانوں کی تربیت اور آئی ٹی سیکٹر پالیسی پر عمل درآمد کے لئے اقدامات کررہی ہے۔

‎وفاقی وزیر نے شرکاء کو بتایا کہ وزارت نے سندھ ، بلوچستان ، کے پی اور گلگت بلتستان کے پسیماندہ علاقوں میں 3 اور 4 جی کنکشن اور براڈ بینڈ سہولت جیسی آئی ٹی سہولیات کی بہتری اور فراہمی کے لئے بجٹ میں 5.1 ارب روپے مختص کیے ہیں۔

‎وفاقی وزیر نے بتایا کہ وزارت آئی ٹی نے آئی ٹی برآمدات میں 24 فیصد اضافہ کیا ہے- 2018 میں 9.95 ملین امریکی ڈالر سے جون 2020 میں 1.23 بلین امریکی ڈالر تک اضافہ کیا ہے۔

‎وزیر نے گلگت بلتستان کے معاملے پر تبادلہ خیال کرتے ہوئے شرکاء کو بتایا کہ وزارت گلگت بلتستان میں آئی ٹی کی سہولیات کو بہتر بنانے کے لئے عملی اقدامات کررہی ہے۔ انہوں نے بتایا کہ چیف آف آرمی اسٹاف نے جی بی میں آئی ٹی پارک کا افتتاح کیا تھا جس کی پوری مالی اعانت آئی ٹی وزارت نے کی تھی۔ مزید یہ کہ ، جی بی میں 2 جی کے 62 ٹاورز کو 3 جی اور 4 جی کے 92 ٹاورز میں اپ گریڈ کرنے کا منصوبہ بھی زیر تعمیر ہے۔ اس طرح کے اقدامات سے نہ صرف سیاحت کے شعبے میں بہتری آئے گی بلکہ یہ مقامی لوگوں کے لئے بھی مددگار ثابت ہوگی۔
‎وفاقی وزیرنے پاکستان میں آئی ٹی کے نصاب کو اپ گریڈ کرنےاور اسے جدید دور کی آئی ٹی ضروریات کے مطابق مرتب کرنے پر زور دیا۔

‎انہوں نے بتایا کہ وزارت آئی ٹی سیکٹر میں ٹیکس اصلاحات لانے کے معاملات پر وزیر اعظم کی ٹاسک فورس کی سفارشات پر عمل درآمد کے لئے پوری طرح پرعزم ہے۔ ایک سوال کے جواب کے دوران وزیر نے واضح کیا کہ آئی ٹی وزارت کسی بھی پابندی کے خلاف ہے جو ترقی کے عمل میں رکاوٹ ہے

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.