fbpx

لاہور ہائی کورٹ نے بڑے پیمانے پرججزکے تبادلے کر دیئے ہیں

لاہور ہائی کورٹ نے پنجاب میں 07 ڈسرکٹ اور سیسشن جج کے تبادلوں کا نوٹس جاری کردیا ہے، نوٹیفیکیشن کے مطابق ملک مشتاق احمد اوجلا کو لاہور سے قصور ٹرانسفر کردیا گیا ہے، تاہم محمد سعید اللہ کو ڈائریکٹرجنرل، ڈائریکٹوریٹ آف ڈسٹرکٹ جوجیشری، لاہور ہائی کورٹ اورمحمد جاوید الحسن چشتی ایچ آر، ڈسٹرکٹ جوجیشری، لاہور ہائی کورٹ میں ہی تعینات رہیں گے، ضرورت پڑھنے پرانہیں لاہور ہائی کورٹ کے مقدمات کی سنوائی کرنے بلایا جاسکتا ہے.
عرفان احمد سعید کو قصور سے لاہور ٹرانسفر کر دیا گیا ہے، انہیں لاہور ہائی کورٹ کے رجسٹرارکی ذمہ داری سونپی گئی ہے، یہ ملک مشتاق احمد اوجلا کی جگہ پر آئے ہیں، اینٹی ٹیراریزم ملتان کورٹ 2 کے جج مسعود ارشد کولاہور ہائی کورٹ میں ڈائیریکٹر جنرل، ڈائریکٹوریٹ آف ڈسٹرکٹ جوجیشری کے عہدے پر تعنیات کر دیا گیا ہے، یہ محمد سعید اللہ کی جگہ اپنی ذمہ داری ادا کریں گے.
چوہدری عبدالراشد عابد سپیشل اینٹی کرپشن کورٹ بھاولپورکو ڈائریکٹر اور سیسشن جج ڈسٹرکٹ جوجیشری ایچ آر لاہور ہائی کورٹ تعنیات کر دیا گیا ہے، محمد یار والانہ سینئیر ایڈیشنل رجسٹرار لاہور ہائی کورٹ ملتان بینچ کو چیف جسٹس لاہور ہائی کورٹ کا پرنسپل سٹاف آفیسر تعنبات کردیا گیا ہے.
ٹرانسفر ہونے والے تمام جج 06 جولائی 2021 کو اپنی نئی تعنیاتی پر رپورٹ کریں گے، ان تمام جج صاحبان کو لاہور ہائی کورٹ میں مقدمات کی سنوائی کیلئے بلایا جا سکتا ہے.