fbpx

نور مقدم کے وکیل کا دھماکہ خیز انٹرویو، پولیس پہنچی تو کیا دیکھا، جانیے مبشر لقمان کی زبانی

نور مقدم کے وکیل کا دھماکہ خیز انٹرویو، پولیس پہنچی تو کیا دیکھا، جانیے مبشر لقمان کی زبانی

باغی ٹی وی: سینئر اینکر پرسن مبشر لقمان نے نور مقدم کیس کے وکیل شاہ خاور سے اپنے اہم وی لاگ میں بات کی . اس سلسلے میں نور مقدم کے وکیل شاہ خاور نے کیس کو صورت حال بتاتے ہوئے کہا ہے ، یہ کیس ایک کھلا کیس ہے جس میں‌ چشم دید گواہ نہیں‌ ہے . لیکن واقعاتی شہادتیں موجود ہیں‌.

انہوں نے کہا کہ جب پولیس اس قتل کے وقوعہ پر پہنچی تو قاتل جائے وقوع پر موجود تھا اور اسی کمرے کے اندر موجود تھا تھا جہاں نور مقدم کی لاش بری حالت میں پڑی تھی . پولیس نے اس سے آلہ قتل بھی برآمد کیا اور اسی طرح دیگر شہادتیں بھی فرانزک کے لیے اکٹھی کر لیں .


ان کا کہنا تھا کہ دیگر یہ کہ سی سی ٹی وی فوٹیج سے ملنے والے ثبوتوں سے بہت سی پیچیدہ باتیں کھل رہی ہیں‌. اور کیس میں واضح ہے کہ مبینہ طور پرقاتل ہی نور مقدم کا قاتل ہے .

مبشر لقمان نے سوال کیا کہ کیا اس مقدمے کا دفاع کرنے والے پھر اس کیس کو اس طرف نہیں لے جائیں‌گے اور نور کے کردار پر سوال اٹھائیں گے کہ اس کے اس کے ساتھ تعلقات تھے . میڈیا پر یہ باتیں شروع ہوجائیں گی اور ایسا کچھ ہمارے میڈیا پر بھی ہوتا ہے . پچھلے کیسز میں یہی کچھ ہوتا چلا آیا ہے .

وکیل شاہ خاور کا کہنا تھا کہ یہ سب کچھ تو دفاع کے اندر وکلا کرتے ہیں اور کردار کشی کی جاتی ہے . لیکن ہم نے اس کی پراسکیوشن بڑی مضبوط کی ہے اور تمام شہادتیں جو قاتل کے خلاف ہیں اس کو شامل کیا ہے . ہماری کوشش ہے کہ تفتیسش کا عمل جلدی مکمل ہو . اور یہ کیس جلد اپنے انجام کو پہنچے ،

مبشرلقمان نے سوال کیا کہ کیا آپ پر پریشر بھی آ رہا ہے تو اس کے جواب میں وکیل شاہ خاور نے کہا کہ ایسے مقدمات میں پریشر آتا ہی رہتا ہے لیکن ہم کسی پریشرمیں نہیں‌آئیں گے . مبشر لقمان کا وکیل شاہ خاور کو کہنا تھا کہ جو بھی ہو جائے آپ کو پریشر میں نہیں آنا. مبشر لقمان نےکہا کہ ملزم پولیس کی حراست میں‌ کافی سکون دہ حالت میں دیکھا گیا . تو اس کے جواب میں شاہ خاور کا کہنا تھا کہ جب ایک ملزم نے اعتراف جرم کر لیا ہو . پھر اس کو تھرڈ ڈگری تشدد نہیں کیا جاتا. اس پر مبشر لقمان کا کہنا تھا کہ پولیس کے ہاں بیان معتبر نہیں ہوتا مجسٹریٹ کے سامنے اس نے اعتراف نہں کیا.

شاہ خاور کا کہنا تھا کہ قتل کیس میں ملزم کا پہلا بیان کافی اہمیت کا حامل ہوتا ہے . اس لیے اس قتل میں پراسکوشن کافی مضبوط ہے . یہ بیان اس کے حوش و ہواس میں‌ تھا. جو کہ کافی مدد دے سکتا ہے .

مبشر لقمان نے پوچھا کہ آپ اس اندوہ ناک قتل کے بارے کیا سوچتے ہیں تو شاہ خاور کا کہناتھا کہ بہت ہی زیادہ خوفناک کیس ہے جس کی ویڈیو کو کوئی دیکھ بھی نہیں سکتا . ہماری کوشش ہے کہ اس کیس کو ایک مثال بنایا جائے کہ آئندہ خواتین کے ساتھ کوئی ایسا واقعہ نہ ہو.