ساہیوال:مہنگائی کے بے قابو جن نے عوام کی کمر توڑ دی،انتظامیہ بے بس،لوگ فاقہ کشی پر مجبور

ساہیوال:ضلعی انتظامیہ مہنگائی کنٹرول کرنے میں بری طرح ناکام،پھل وسبزیاں بدستورمہنگی،آلو130روپے فی کلو تک جا پہنچے،پیاز و سبزمرچ کے نرخ بھی آسمان پر،دکانداروں کی من مانی،شہری پریشان۔ساہیوال بھر میں اشیاء خوردنوش کی قیمتوں میں کمی نہ آسکی اور دکاندار من مانی قیمت وصول کرتے رہے،بڑھتی ہوئی مہنگائی نے شہریوں کاجینا محال کردیاہے،مارکیٹ میں سرکاری ریٹ لسٹ کے برعکس گزشتہ روزسیب(اول)150سے210روپے فی کلو،سیب(دوئم)130سے150روپے،سیب(گولڈن)110سے130روپے،امرود85سے100روپے،ناشپاتی80سے 105روپے،انارقندھاری160سے180روپے،انگور300سے350روپے کلو،کیلا(اول)80سے100روپے درجن،کیلا(دوئم)60سے80روپے درجن،آلو(اول)110سے 130 روپے کلو،آلو(دوئم)80سے 100روپے،پیاز(اول)90سے110روپے،ٹماٹر(اول)200سے 210روپے،ٹماٹر(دوئم)160سے190روپے کلو،لہسن 230سے270روپے کلو،ادرک700سے 800روپے کلو،سبزمرچ 200سے250روپے،شملہ مرچ220سے250روپے،کھیرا80سے100روپے کلو،کریلا90سے110روپے،پھول گوبھی70سے90روپے،بندگوبھی110سے 125روپے،گھیا60روپے،بیگن50روپے،بھنڈی80سے100روپے،شلجم40سے50روپے،مولی40سے45روپے،گاجر70سے80روپے،اروی140سے200روپے،ٹینڈہ 70روپے،حلوہ کدو50روپے،میتھی فی گڈی40روپے،دھنیا20سے30روپے اورپالک فی(گڈی)40روپے سے50روپے فروخت ہوئی،جبکہ چکن مٹن اور بیف کے ساتھ ساتھ انڈوں کی قیمتیں بھی اسی طرح رہیں،ضلعی انتظامیہ ذرائع کے مطابق سرکاری قیمتوں پرعملدرآمدکیلئے 40سے زائد پرائس کنٹرول مجسٹریٹس فیلڈ میں ہیں جبکہ زمینی حقائق کے مطابق پھل وسبزیاں سرکاری نرخوں کی بجائے دکاندارمن مانی قیمت پر فروخت کررہے ہیں-عوامی سماجی حلقوں نے وزیراعلیٰ پنجاب،کمشنروڈپٹی کمشنرساہیوال سے نوٹس لینے کامطالبہ کیاہے-

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.