گستاخانہ خاکوں کے خلاف مختلف تعلیمی اداروں کے طلباءکی ریلی۔

تعلیمی اداروں کے طلباء بھی فرانس کی طرف سے گستاخانہ خاکوں کی اشاعت کے خلاف سڑکوں پر آگئے۔

رپورٹ بائے عبدالرحمان یوسف
باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق ننکانہ صاحب کے قصبہ بچیکی میں تعلیمی اداروں کے طلباء بھی فرانس کی طرف سے گستاخانہ خاکوں کی اشاعت کے خلاف سڑکوں پر آگئے۔طباء کا حکومت پاکستان سے فرانس کے ساتھ سفارتی تعلقات ختم کر نے کا مطالبہ کیا۔
تفصیلات کے مطابق فرانس کی طرف سے نبی رحمت ﷺ کے گستاخانہ خاکوں کے اشاعت کے خلاف بچیکی میں مختلف تعلیمی اداروں کی طرف سے احتجاجی ریلی کا انعقاد کیا گیا جس کی قیادت معروف عالم دین مولانا ضیاء السلام قمر نے کی۔جبکہ ریلی میں مختلف تعلیمی اداروں اور مدارس کے طلباءاساتذہ اور شہریوں کی کثیر تعداد نے شرکت کی۔ریلی کے شرکاء نے ہاتھوں میں پلے کارڈز اٹھا رکھے تھے۔جن پر فرانس کے خلاف نعرے درج تھے۔شرکاء نے فرانس کے خلاف شدید نعرے بازی بھی کی۔ریلی جب مین اڈہ چوک پہنچی تو سماجی تنظیم عزم پاکستان فاؤنڈیشن کی طرف سے شرکاء پر گل پاشی کی گئی۔ریلی گرلز ڈگری کالج چوک سے شروع ہو ئی جو مختلف راستو ں سے ہوتی ہوئی واپس اسی جگہ اختتام پذیر ہو ئی۔ریلی کے شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے مولانا ضیاء السلام قمر نے کہا کہ حضرت محمد ﷺ سے محبت ہمارے ایمان کا بنیادی حصہ ہے۔ایک ایک مسلمان نبی رحمت ﷺ کی حرمت پر کٹ مرنے کو ہمہ وقت تیار ہے۔انہوں نے کہا کہ کسی بھی گستاخ رسول ﷺ کی حرکت کو کسی بھی صورت معاف نہیں کیا جاسکتا اس لئے حکومت پاکستان فی الفور فرانس کے ساتھ سفارتی تعلقات ختم کرنے کا اعلان کرے۔انہوں نے شرکاء سے بھی مطالبہ کیا کہ وہ فرانس کی مصنوعات کا بائیکاٹ کر دیں تاکہ اسے مسلمانوں کے جذبات کا احساس ہو سکے۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.