fbpx

واٹس ایپ کی اینڈرائیڈ اور آئی او ایس ڈیوائسز کے دوران چیٹ منتقلی کے لئے نئے فیچر کی آزمائش

فیس بک کی زیرملکیت میسجنگ ایپ واٹس ایپ ایک نئے فیچر کی آزمائش کررہا ہے-

باغی ٹی وی : اس فیچر جس تحت واٹس ایپ صارفین اینڈرائیڈ اور آئی او ایس ڈیوائسز کے درمیان چیٹ ، لوگس اور ٹرانسکرپٹ با آسانی منتقل کرسکیں گے۔

واٹس پر نظر رکھنے والی ویب سائٹ ویب بیٹا انفو کے مطابق اس نئے فیچر کے ذریعے واٹس ایپ صارفین کے لیے دو پلیٹ فارم کے درمیان سوئچ کرنا آسان ہوجائے گا۔


رپورٹ کے مطابق اینڈرائیڈ اور آئی او ایس صارفین واٹس ایپ کے جدید ورژن کے ذریعے ہی آئی او ایس ڈیوائس کا ڈیٹا اینڈرائیڈ ڈیوائس میں بآسانی منتقل کرسکیں گے۔

س کے بعد چیٹ ایک سے دوسری ڈیوائس میں منتقل کی جاسکے گی تاہم ویب بیٹا انفو کی جانب سے جاری اسکرین شاٹ میں بتایا گیا ہے کہ اگر ایپ میں واٹس ایپ کا جدید ورژن موجود نہیں ہوگا تو ایپ صارف کو چیٹ منتقلی کے لیے اپ ڈیٹ کا سگنل دے گی جس کے بعد چیٹ ایک سے دوسری ڈیوائس میں منتقل کی جاسکے گی-

یہ نیا فیچر ملٹی ڈیوائس سپورٹ کے لیے بھی کارآمد ہوگا کیونکہ اس چیٹ مائیگریشن ٹول سے صارفین کو ایک اکاؤنٹ کے تحت کئی ڈیوائسز کو منسلک کرنے کی سہولت مل سکے گی۔

چیٹ مائیگریشن کے لیے کئی تھرڈ پارٹی ایپس موجود ہیں مگر واٹس ایپ ان کو سپورٹ نہیں کرتا بلکہ سیکیورٹی کے لیے خطرہ قرار دیتا ہے۔

چونکہ ابھی یہ فیچر آزمائش کے مراحل سے گزر رہا ہے اسی لئے یہ کب تک صارفین استعمال کر سکیں گے اس کے بارے میں ابھی کچھ کہنا قبل از وقت ہو گا-

خیال رہے کہ فی الحال آئی او ایس اور اینڈرائیڈ صارفین کے درمیان چیٹ منتقلی کا کوئی فیچر موجود نہیں ہے جس کے باعث دونوں صارفین کو پریشانی کا سامنا ہے۔

دوسری جانب آئی او ایس پر واٹس ایپ صارفین کے ڈیٹا کا بیک اپ بنانے کے لیے آئی کلاؤڈ کا استعمال کرتا ہے جس کے تحت صارف کے لیے نئے آئی فون پر سوئچ کرنا اور واٹس ایپ ہسٹری ری اسٹور کرنا آسان ہوجاتا ہے جبکہ اینڈرائیڈ ڈیوائسز پر واٹس ایپ چیٹ ہسٹری ری اسٹور اور بیک اپ بنانے کے لیے گوگل ڈرائیو استعمال کی جاتی ہے-

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.