fbpx

واٹس ایپ نے اپنی نئی پرائیویسی پالیسی کے نوٹیفیکشنز بھیجنے کا سلسلہ شروع کر دیا

فیس بک کی زیرملکیت کمپنی واٹس ایپ کی جانب سے ایک بار پھر پالیسی کے حوالے سے نوٹیفکیشنز بھیجنے کا سلسلہ شروع ہورہا ہے۔

باغی ٹی وی : واٹس ایپ نے 4 جنوری 2021 کو دنیا بھر میں صارفین کو نئی پرائیویسی پالیسی اور اصول و ضوابط میں تبدیلیوں سے آگاہ کرنے کے لیے نوٹیفکیشنز بھیجنا شروع کیے تھے کہ نئی پالیسی کا نفاذ 8 فروری سے ہوگا ورنہ ان کے اکاؤنٹس ڈیلیٹ کردیئے جائیں گے تاہم لوگوں کے شدید ردعمل پر پرائیویسی پالیسی کا اطلاق 15 مئی تک ملتوی کردیا گیا تھا۔


واٹس ایپ پر نظر رکھنے والی سائٹ ویب بیٹا انفو WABetaInfo نے بتایا کہ میسجنگ ایپ میں صارفین کو نئی پالیسی کے حوالے سے آگاہ کرنے کے لیے الرٹس بھیجنے کا سلسلہ شروع ہوگیا ہے۔

تاہم اس بار کمپنی کی جانب سے یہ نوٹیفکیشنز ان صارفین کو بھیجے جارہے ہیں جن کی جانب سے اب تک نئی پالیسی کو قبول نہیں کیا گیا۔

یعنی اگر جنوری میں آپ اس طرح کے نوٹیفکیشن کو مسترد کرنے کی بجائے اسے قبول کرچکے ہیں تو آپ کو دوبارہ پالیسی کے بارے میں رائے نہیں لی جائے گی۔


فوٹوز بشکریہ ویب بیٹا انفو

نئے نوٹیفکیشن کے اسکرین شاٹس سے معلوم ہوتا ہے کہ کمپنی کی جانب سے صارفین کو بتایا جارہا ہے کہ نئی پالیسی اور اصول و ضوابط کا اطلاق 15 مئی سے ہوگا۔

کمپنی نے یہ بھی واضح کیا ہے کہ تبدیلی کے باوجود واٹس ای میں تمام چیٹس اینڈ ٹو اینڈ انکرپٹڈ ہوں گی، جبکہ کاروباری اداروں سے چیٹ کو آسان بنایا جارہا ہے، جس کا کچھ حصہ فیس بک سے شیئر کیا جاسکتا ہے، مگر یہ آپشنل ہوگا یعنی صارف کو ہی اس کا انتخاب کرنا ہوگا۔

مزید براں صارفین کو یہ بھی بتایا جارہا ہے کہ کاروباری ادارے ان سے کی گئی چیٹس کا انتظام کس طرح کرتی ہے۔

رپورٹ میں یہ نہیں بتایا گیا کہ نئی پالیسی کو قبول نہ کرنے والوں کے ساتھ کیا ہوگا مگر اس حوالے سے فروری میں ایک رپورٹ میں تفصیلات سامنے آئی تھیں۔

معروف میسجنگ ایپ واٹس ایپ نے صارفین کو نئی پرائیویسی پالیسی پر نظر ثانی کا موقع دیتے ہوئے کہا ہے کہ صارفین کو اپنی مرضی اور اپنے ٹائم فریم کے تحت پالیسی کا جائزہ لینے کی سہولت فراہم کریں گے اور یاد دہانی کے لیے ایک بینر بھی ایپ پر نظر آتا رہے گا۔

واٹس ایپ نے پرائیویسی سے متعلق یہ وضاحت ایک ای میل کے جواب میں دی جس میں یہ بھی کہا گیا تھا کہ یہ سہولت 15 مئی تک دستیاب رہے گی اور اس کے بعد شرائط تسلیم نہ کرنے والوں کو راضی کرنے کے لیے بتدریج مطالبہ کیا جائے گا۔

ای میل میں مزید کہا گیا ہے کہ 15 مئی کے بعد شرائط تسلیم نہ کرنے والے ایپ پر آنے والے میسیجز نہیں پڑھ سکیں گے تاہم انہیں مختصر وقت کے لئے نوٹیفکیشن اور کالز موصول کرنے کی سہولت میسر رہے گی۔

ای میل کے مطابق یہ ‘مختصر وقت’ کئی ہفتوں کا ہوگا جبکہ ایف اے کیو کا نیا پیج کا لنک بھی دیا گیا جس میں ایسے صارفین کے حوالے سے اقدامات کی تفصیلات دی گئی ہے۔

کمپنی کی جانب سے غیرمتحرک کیے جانے والے صارفین کو 15 مئی کے بعد بھی نئی پالیسی یا اپ ڈیٹس کو قبول کرنے کی سہولت دی جائے گی اور ان کے میسجز بحال کردیئے جائیں گے۔

ایسے غیرمتحرک صارفین کے حوالے سے واٹس ایپ کی پالیسی میں واضح کیا گیا کہ اکاؤنٹس عام طور پر غیرمتحرک ہونے کے 120 دن بعد ڈیلیٹ کیے جاتے ہیں۔

واٹس ایپ کا صارفین کو نئی پرائیویسی پالیسی پر نظر ثانی کا موقع

واٹس ایپ چیٹ کو محفوظ بنانے کے چار طریقے

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.