ابلتے گٹروں نے کیا جینا حرام

ابلتے گٹروں نے جینا کیا حرام
شیخوپورہ (نمائندہ باغی ٹی وی محمد فہیم شاکر سے) محلہ رام گڑھا (مدینہ پارک) گنجان آبادی کا حامل شہر کا ایک وسطی محلہ ہے جہاں ابلتے گٹروں کا انکشاف ہوا ہے جس سے اہل محلہ مختلف پریشانیوں کا شکار ہیں
کیا بچے کیا بڑے سبھی ان ابلتے گٹروں کے گندے پانی سے گزرنے پر مجبور ہیں
نمازی مسجد تک جانے سے قاصر ہیں کیونکہ گلیاں گندے پانی سے بھری پڑی ہیں
نمائندہ باغی ٹی وی سے بات کرتے ہوئے مقامی محمد طارق نے بتایا کہ اگر مہمان آجائے تو ہم شرمندہ ہوتے ہیں کیونکہ گھروں کو جانے والا کوئی راستہ صاف نہیں، متعدد مرتبہ متعلقہ اداروں کو درخواست دے چکے، سیٹیزن پورٹل پر شکایت درج کروا چکے، میونسپل کارپوریشن کو فون کالز کر چکے، لیکن اول تو کوئی آتا نہیں اور اگر میونسپل کارپوریشن والے آتے ہیں تو فی گھر 300 روپے اینٹھتے ہیں، کچھ دیر مشین چلاتے ہیں عارضی طور پر پانی نکالتے ہیں اور رفو چکر ہوجاتے ہیں، لیکن کچھ ہی عرصہ بعد گٹر ہیں کہ پھر سے ابلنا شروع ہوجاتے ہیں یہی نہیں پانی بہہ کر قریبی کھیل کے کھلے میدان میں جمع ہو چکا ہے جس سے بد بو اور تعفن کے ساتھ مچھر کی افزائش ہو رہی ہے، بیماریاں الگ پیدا ہو رہی ہیں
ہم جائیں تو کہاں، شکایت کریں تو کس سے؟
یہ بھی شہری ہیں جو اس گندے ماحول میں جی رہے ہیں اور اس ماحول کو صاف کرنے کے لیے متعلقہ اداروں کو بار بار شکایات کر چکے ہیں لیکن ٹھنڈے کمروں میں بیٹھنے والے شاید اس اذیت ناکی سے واقف نہیں جس سے اہل محلہ گزر رہے ہیں، ورنہ اس مسئلے کو مستقل بنیادوں پر کب کا حل کیا جا چکا ہوتا
اہل محلہ نے ڈپٹی کمشنر، اسسٹنٹ کمشنر اور چیف میونسپل کارپوریشن آفیسر سے پھر سے درخواست کی ہے کہ ہمارا یہ مسئلہ حل کروایا جائے

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.