fbpx

البرٹ کامو یا البیغ کامو:ایک فرانسیسی فلسفی

پیدائش:07 نومبر1913ء
الذرعان
وفات:04 جنوری 1960ء
ولیبلوین
وجۂ وفات:کار حادثہ
مدفن:لورمارین
رہائش:فرانس
شہریت:فرانس
رکن:امریکی اکادمی برائے سائنس و فنون
زوجہ:فرانسائن فیئر
مادر علمی:جامعہ الجزائر (1935-مئی 1936)
تخصص تعلیم:فلسفہ
تعلیمی اسناد:ماسٹر آف آرٹس
دائرۂ عمل: مصنف، فلسفی، ناول نگار
صحافی، مضمون نگار، ڈراما نگار
منظر نویس، شاعر
مادری زبان:فرانسیسی
زبان:فرانسیسی
کارہائے نمایاں:موت کی خوشی
مؤثر:نطشے
عسکری خدمات
لڑائیاں اور جنگیں:دوسری جنگ عظیم
اعزازات:
نوبل انعام برائے ادب (1957)

البرٹ کامو یا البیغ کامو (فرانسیسی: Albert Camus) ایک فرانسیسی فلسفی تھے جنھوں نے بے شمار مشہور کتب لکھیں۔ ان کوادب پر 1957 میں نوبل پرائز دیا گیا تھا۔ آپ الجزائر میں 1913 میں پیدا ہوئے جس وقت فرانسیسوں کی سربراہی تھی۔
موجودیت
۔۔۔۔۔۔
البیغ کامو کی کتابوں کو موجودیت کی مثالیں سمجھی جاتی ہیں۔
مذہبی خیالات
۔۔۔۔۔۔
البرٹ خدا و مذہب پر یقین نہیں رکھتا تھا مگر پھر بھی یہ سمجھتا تھا کہ وہ ملحد نہیں ہے۔ خدا کو جھٹلانے کا انسانی زندگی کے لیے کیا منطقی نتیجہ نکلتا ہے، کیمس نے اسے ان الفاظ میں بیان کیا: You will never live if you are looking for the meaning of life یعنی اگر تم زندگی کے معنی جاننے کی کوشش کرو گے تو زندہ نہ رہ سکو گے۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
عالمی ادبی شخصیات کا تعارفی سلسلہ
تلاش و ترسیل : آغا نیاز مگسی