پولیس اہلکار سعد نے سب انسپکٹر اللہ بخش کے ذهنی معزور بیٹے پرتوڑے ظلم کے پہاڑ !!

شاہ فیصل کالونی تھانہ کی مدد گار 15 عام عوام کی جان و مال کی حفاظت تو دور کی بات ہے اپنے ہی پیٹی بھائیوں کے بچوں پر تشدد کرنے پر اتر آئی۔
شاہ فیصل کالونی تھانے کی حدود میں رات گئے ایک افسوس ناک واقعہ پیش آیا ۔نہایت ایماندار اور شریف انسان سب انسپکٹر اللہ بخش کے بیٹے شارخ جس کا ذہنی توازن درست نہیں ہے۔اس کی معمولی سی غلطی پر پولیس اہلکار سعد نے منہ پر پسٹل کے بٹ مارنا شروع کر دیے ۔اور کال کر کے اپنے سسر آئی ایس آئی محفوظ کو بلا لیا ۔بات یہاں تک ختم نہیں ہوئی۔ شراب کے نشے میں اے ایس آئی محفوظ نے شارخ کو پولیس موبائل میں ڈال کر مار پیٹ کرنا شروع کر دی ۔‏جس کے بعد پولیس والے کے بچے کو ڈاکوؤں کی طرح شاہ فیصل کالونی تھانے لے گیا اور وہاں جا کر جان سے مارنے کی دھمکیاں دیتا رہا ۔جس کے بعد شارخ کو بنا کسی طبی امداد اور میڈیکل کے تھانہ سے روانہ کر دیا گیا ۔ اے ایس آئی محفوظ اور اس کا داماد اہلکار سعد جو کے خود مددگار 15 میں ڈیوٹی کر رہا ہے۔علاقے میں اے ایس آئی محفوظ اور سعد پولیس والا دہشت کی علامت بنے ہوئے ہیں ۔ اہل محلہ گرین ٹاؤن کی سندھ پولیس کے بالا افسران سے ان دونوں کے خلاف کارروائی کرنے کی اپیل ۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.