fbpx

بلاول بھٹوکے جنوبی پنجاب میں ڈیرے:صحافیوں سے تفصیلی گفتگونے عزائم سے پردہ ہٹا دیا

‏ملتان:بلاول بھٹوکے جنوبی پنجاب میں ڈیرے:صحافیوں سے تفصیلی گفتگونے عزائم سے پردہ ہٹا دیا ،اطلاعات کے مطابق پاکستان پیپلزپارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری اس وقت ملتان میں ہیں اوران کا ہدف جنوبی پنجاب کی سیاست میں ہلچل مچانا ہے

اس موقع پر بلاول بھٹو نے پیپلز سیکریٹریٹ میں کالم نویسوں اور مدیران سے ملاقات کرتے ہوئے پاکستان اورعالمی حالات پرسیرحاصل گفتگو کی ، اس موقع پر چیئرمین بلاول بھٹو زرداری، کالم نویسوں اور مدیران کے درمیان ملکی سیاسی معاملات پر تفصیلی طور پر تبادلہ خیال ہوا

چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے اس موقع پر کہاکہ ‏جنوبی پنجاب میں پی پی پی کی حکومت نے ترقیاتی کاموں کا جال بچھایا، ایک وزیراعظم جنوبی پنجاب سے دیا،
اگر ملک میں شفاف انتخابات ہوئے تو پی پی پی ملک بھر سے کامیاب ہوگی، پی پی پی نے جنوبی پنجاب کے لئے جتنا کام کیا، کسی اور نے نہیں کیا،

چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ گو میاں صاحب کو اکثریت دلوائی گئی، عمران خان کو لایا گیا مگر جنوبی پنجاب کے لئے کام صرف پی پی پی نے کیا،
ملک میں نیشنل ایکشن پلان پر عمل درآمد نہیں ہورہا، پاکستان پیپلزپارٹی خوش حال، ترقی پسند اور ایک جمہوری پاکستان چاہتی ہے پاکستان پیپلزپارٹی کو ایک سازش کے تحت پنجاب میں نقصان پہنچایا گیا اور یہ سب کو پتہ ہے کہ کیسے ہوا،

چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ سندھ میں این آئی سی وی ڈی کے منصوبے سے جنوبی پنجاب کے عوام بھی فائدہ اٹھارہے ہیں، صوبائی خودمختاری کے حوالے سے فرحت اللہ بابر کی سربراہی میں پارلیمانی کمیشن کی سفارشات پر عمل درآمد ہونا چاہئیے، موجودہ حکومت ملک کی ثقافتی اکائیوں کی پہچان کو چھیننا چاہتی ہے،

چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ میاں نواز شریف کی واپسی ان کی اپنی مرضی ہے تاہم عوام کو الطاف حسین اور اشرف غنی ماڈل قبول نہیں،عوام چاہتے ہیں کہ ان کی لیڈرشپ عوام کے درمیان رہے، پی ڈی ایم میں شامل جماعتیں نہ عثمان بزدار کو ہٹانا چاہتی ہیں اور نہ عمران خان کی حکومت کو گرانا چاہتی ہیں، پی ڈی ایم میں شامل جماعتوں کو اپنے غیرسنجیدہ روئیے کے ساتھ کوئی کامیابی نہیں مل سکتی،

چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ میں نے اس حکومت کے پہلے دن قومی اسمبلی میں عمران خان کو سلیکٹڈ کہا تھا، ہم نے عمران خان کے خلاف سینیٹ کی نشست جیتی، پی پی پی دورِ حکومت میں ڈی اے پی کھاد کا تھیلا ساڑھے تین ہزار روپوں میں ملتا تھا اور آج سات ہزار روپے کا ہوچکا ہے،

چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ پی پی پی دورِ حکومت میں یوریا کھاد کا بارہ سو میں ملنے والا تھیلا آج دوہزار روپے کا ہوچکا ہے،جب پاکستان پیپلزپارٹی حکومت بنائے گی تو کھاد پر سبسڈی کو بحال کرکے قیمتوں کو کم کیا جائے گا، مہنگی بجلی، کھاد اور ڈیزل کی وجہ سے کسانوں کے لئے اچھی فصل دینا ممکن نہیں رہا جس کی وجہ سے معیشت تباہ ہوگئی،

چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ پاکستان پیپلزپارٹی اپنی حکومت میں پنجاب کے کسانوں کے لئے خصوصی پیکجز دے گی، وفاقی حکومت نے جنوبی پنجاب میں سیکریٹریٹ کے قیام کا ڈرامہ کیا،پنجاب کو ہم عثمان بزدار کی نالائق حکومت پر نہیں چھوڑ سکتے، پی ڈی ایم کی بعض جماعتوں کے غلط بیانئے کی وجہ سے اپوزیشن ایک پیج پر نہ آسکی، پی پی پی آئندہ حکومت بنا کر عوامی مسائل کو حل کرے گی ، پی پی پی نے بھی انتخابی اصلاحات کی تھیں جس کے بعد قائد حزب اختلاف اور الیکشن کمیشن طاقت ور ہوا،

چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ اتفاق رائے سے اصلاحات کی جاتی ہیں مگر یہ حکومت اصلاحات کو تھوپنا چاہتی ہے، پی پی پی وہ واحد جماعت ہے کہ جس نے اپنے کارکن کو وزیراعظم بنایا، ن لیگ نے اسٹبلشمنٹ کے ساتھ مل کر پنجاب میں پی پی پی کو نقصان پہنچایا، ن لیگ کے دور میں میرے والد پر بدترین تشدد ہوا مگر ہم نے یہ سب نظرانداز کیا، پی ڈی ایم میں شامل جماعتیں کنفیوژن کا شکار ہیں، کہتے ہیں کہ استعفی دیں گے تاہم استعفی دیا تو اپنے پلان کے مطابق وہ تحریک عدم اعتماد کیسے لائیں گے؟

ملتان میں اس اہم مجلس میں چیئرمین بلاول بھٹو زرداری کے ہمراہ سید یوسف رضا گیلانی، مخدوم احمد محمود، فیصل کریم کنڈی، خواجہ رضوان، نتاشہ دولتانہ، عبدالقادر شاہین، حیدرزمان قریشی ودیگر موجود تھے

چیئرمین بلاول بھٹو زرداری سے ظفر آہیر، میاں عبدالغفار، سید سجاد حسین بخاری، شکیل انجم، شوکت اشفاق، افتخارالحسن اور اسد ممتاز خان نے ملاقات کی، مہر فضیل سہو، مہر عزیز، سید ندیم شاہ، شکیل بلوچ، کامران سعد، پروفیسر انوار، مقبول گیلانی، پروفیسر نسیم شاہد اور ملک الطاف علی کھولھر بھی چیئرمین بلاول بھٹو زرداری سے ملاقات کرنے والوں میں شامل ہیں

اس کے علاوہ چیئرمین بلاول بھٹو زرداری سے شمیم اصغر راؤ، رانا محبوب اختر، جمشید رضوانی، ڈاکٹر امجد بخاری، شاکر حسین شاکر اور رضی الدین رضی نے ملاقات کی،حیدر جاوید سید، عبدالجبار مفتی، خالد بیگ، ظہور دھریجہ، مصیح اللہ جامپوری، سارا شمشاد، ڈاکٹر اشرف اشولال اور خورشید ملک بھی چیئرمین بلاول بھٹو سے ملاقات کرنے والوں میں شامل ہیں‌

ملتان میں چیئرمین بلاول بھٹو زرداری سے اظہر سلیم مجوکہ، شیخ سلیم ناز، ڈاکٹر مزمل، محبوب تابش، اکمل وینس اور ناصر محمود شیخ نے ملاقات کی
ملتان: عاشق خان بزدار، ارشد اقبال بھٹہ، احمد کامران مگسی، نواز کاوش، فاروق ندیم و دیگر بھی چیئرمین بلاول بھٹو زرداری سے ملاقات کرنے والوں میں شامل ہیں

Facebook Notice for EU! You need to login to view and post FB Comments!