ڈائنو سارکیوں ناپید ہوئے سائنسدانوں نے وجہ دریافت کر لی

لگ بھگ6کروڑ 60لاکھ سال قبل زمین پر ایک بہت بڑا شہاب ثاقب آ ٹکرایا تھا
0
180
research

زمین پر کروڑوں سال پہلے ڈائنو سارز رہا کرتے تھے، جن کی نسل بعد ازاں معدوم ہو گئی،اور یہ کیسے ہوا سائنسدانوں نے وجہ دریافت کر لی ہے-

باغی ٹی وی: نیچر جیوسائنس نامی جریدے میں شائع ہونے والی بیلجیم کے سائنسدانوں کی ایک تحقیقاتی رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ لگ بھگ6کروڑ 60لاکھ سال قبل زمین پر ایک بہت بڑا شہاب ثاقب آ ٹکرایا تھا، جس سے ایسی تباہی آئی کہ زمین سے 75فیصد زندگی کا خاتمہ ہو گیا۔

رائل آبزرویٹری آف بیلجیم کے ماہرین کی طرف سے اس واقعے کو ’ Chicxulub‘ ایونٹ کا نام دیا گیا ہے اس واقعے میں زمین سے ٹکرانے والے شہاب ثاقب کا قطر ساڑھے 7میل (تقریباً12کلومیٹر)تھا اور یہ 27ہزار میل (تقریباً43ہزار 452کلومیٹر) فی گھنٹہ کی رفتار سے زمین سے ٹکرایا تھا۔

اگر بی جے پی جیت گئی تو ملک کا وہ حال ہوگا کہ لوگ پہچان …

اس کے ٹکرانے سے زمین میں 124میل (تقریباً200کلومیٹر) چوڑا گڑھا پڑ گیا تھا اس واقعے میں خشکی پر اور سمندر میں پائی جانے والی 75فیصد مخلوق ختم ہو گئی تھی زمین سے سبزہ بھی ناپید ہو گیا تھا اس دھماکے سے زمین سے گردوغبار کا ایک بادل اٹھا جس نے زمین کے بڑے حصے کو ڈھانپ لیا۔

یہ بادل 15سال تک زمین پر سایہ کیے رہا، جس سے زمین کے درجہ حرارت میں 15ڈگری سینٹی گریڈ کی کمی واقع ہو گئی سورج کی روشنی زمین تک نہ پہنچنے اور درجہ حرارت گر جانے سے زمین پر سبزہ اگنا بند ہو گیا اور باقی ماندہ جانوروں میں سے بھی اکثر موت کے گھاٹ اتر گئے۔

ایکشن اور ڈرامے سے بھرپور ویب سیریز ’ہیرا منڈی‘ کا ٹریلر جاری

Leave a reply