ورلڈ ہیڈر ایڈ

سابق وائس چانسلرسرگودہا یونیورسٹی پچھلے آٹھ ماہ سے پابند سلاسل ریاستی ادارے خاموش

سرگودہا(نمائندہ باغی ٹی وی)وائس چانسلر یونیورسٹی آف سرگودہا ڈاکٹر اکرم چوہدری کو جوڈیشل کیے ہوئے آٹھ ماہ سے زائد کا عرصہ گزر چکا ہے مگر تاحال ان پر کوئی جرم ثابت نہیں ہو سکا انہیں نیب نے اختیارت کے ناجائز استعمال پر گرفتار کیا تھا مگر ابھی تک ان پر فرد جرم عائد نہیں ہو سکی اسے نیب کا قصور سمجھیے یا ریاست کا یا نظام عدل کا سقم یا پھر بد نصیبی مگر خقیقت یہ ہے کہ قوم کا مخترم استاد جیل کی سلاخوں کے پیچھے ہے ڈاکٹر اکرم چوہدری آٹھ سال تک یونیورسٹی کے وائس چانسلر رہے ہیں بنیادی طور پر استاد ہیں یونیورسٹیاں کسی بھی معاشرے کی ترقی میں اہم کردار ادا کرتی ہیں ڈاکٹر صاحب کے دور میں یونیورسٹی آف سرگودہا نے بہت ترقی کی اور انہوں نے سرگودہا جیسے پسماندہ علاقے کے لوگوں کو شعور دیا بہت سی انقلابی اصطلاحات کیں مگر بد قسمتی سےتبدیلی سرکار کے آتے ہی انہیں پابند سلاسل کردیا گیا اور تعلیم کا فروغ بھی جرم ٹھرا سرگودہا کی عوام آج بھی ان کی خدمات کی معترف ہے اور حکومت وقت سے یہ مطالبہ کرتی ہے کہ استاد کے رتبے کو سمجھتے ہوئے انہیں فی الفور رہا کیا جائے گورنر پنجاب اس معاملے کا فوری نوٹس لیں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.