آئی ایس آئی سربراہ کی وزیر اعظم عمران خان سے ملاقات، اہم امور پر تبادلہ خیال

وزیراعظم پاکستان عمران خان سے قومی سلامتی کے ادارے آئی ایس آئی کے نومنتخب سربراہ لیفٹیننٹ جنرل فیض حمید نے ملاقات کی ہے جس میں پیشہ وارانہ امور پر تبادلہ خیال کیا گیا۔

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق لیفٹیننٹ جنرل فیض حمید حال ہی میں‌ پاک فوج میں‌ اعلیٰ‌ سطحی تبادلوں کے دوران آئی ایس آئی کے نئے سربراہ منتخب ہوئے ہیں. اسی طرح لیفٹیننٹ جنرل ساحر شمشاد مرزا جی ایچ کیو میں ایڈجوٹیننٹ جنرل، لیفٹیننٹ جنرل عامر عباسی کوارٹرز ماسٹر جنرل اور لیفٹیننٹ جزل معظم اعجاز جی ایچ کیو میں انجینئر ان چیف کو تعینات کیا گیا ہے. آئی ایس آئی کے نومنتخب سربراہ لیفٹیننٹ جنرل فیض حمید، لیفٹیننٹ جنرل عاصم منیر کی جگہ لیں گے جو آٹھ ماہ تک اس عہدے پر فائز رہے۔ لیفٹیننٹ جنرل عاصم منیر کو اکتوبر 2018ء میں یہ ذمہ داری سونپی گئی تھی اور اب انھیں کور کمانڈر گوجرانوالہ بنا دیا گیا ہے۔

آئی ایس آئی کے سربراہ جنرل فیض حمید کو اسی سال اپریل میں لیفٹیننٹ جنرل کے عہدے پر ترقی ملی تھی اور ڈی جی آئی ایس آئی تعیناتی سے قبل وہ جی ایچ کیو میں ایڈجوٹنٹ جنرل کے عہدے پر فائز تھے۔ لیفٹیننٹ‌ جنرل فیض‌ حمید کی آئی ایس آئی کے سربراہ کا عہدہ سنبھالنے کے بعد وزیر اعظم عمران خان سے ان کی پہلی ملاقا ت ہے. اس ملاقات کو بہت اہمیت کی نگاہ سے دیکھا جارہا ہے.

وزیر اعظم عمران خان نے لیفٹیننٹ جنرل فیض‌ حمید کو آئی ایس آئی چیف کا عہدہ سنبھالنے پر انہیں‌ مبارکباد بھی دی.

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.