fbpx

پاکستانی حاجیوں کو پاکستانی حکام کے ناقص انتظامات کے باعث حج کے دوران مشکلات کا سامنا،

پاکستانی حاجیوں کو پاکستانی حکام کے ناقص انتظامات کے باعث حج کے دوران مشکلات کا سامنا،

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق پاکستانی حکام کے ناقص انتظامات کی وجہ سے سعودی عرب کے مرکز 94 میں جو حاجی اس وقت مقیم ہیں۔اس وقت ان کو پانی کی شدید کمی کا سامنا کرنا پر رہا ہے۔

مزید تفصیلات سے آگاہ کرتے ہوئے بتایا جاتا ہے کہ پاکستانی حکام کی طرف سے انتظامات کی طرف توجہ نہیں دی گئی جس کی وجہ سے سعودی عرب کے مرکز نمبر 94 میں بہت سے حاجی جو اس وقت ادر مقیم ہیں ان کو شدید مشکلات کا سامنا کرنا پر رہا ہے۔ نا بجلی ہے اور نا ہی پانی ہے۔ جس کی وجہ سے یہ لوگ بہت پریشانی میں مبتلا ہو چکے ہیں۔

مزید برآں یہ کہ مرکز نمبر 94کی بلڈنگ 901نمبربلڈنگ نمبر 902 اوربلڈنگ نمبر 904 میں پانی بلکل بھی نہیں آ رہا ہے۔ جس کی وجہ سے حاجی بہت زیادہ پریشان ہیں۔ حج کے دوران ہر انسان کی خواہش ہوتی ہے کہ وہ زیادہ سے زیادہ عبادت کرے۔لیکن جو حاجی یہاں پر مقیم ہیں ان کو تو پانی کی عدم دستیابی درپیش ہے۔ جس کی وجہ سے یہ وضو بھی نہیں کر پا رہے ہیں۔ ان کو وضو کرنے کیلئے تھوڑا دور جا کر کسی چیز میں پانی بھرنا پڑتا ہے۔جس کے بعد یہ اس پانی سے وضو کرتے ہیں۔

پانی کی کمی کے علاوہ بجلی کے مسائل بھی درپیش ہیں۔ اتنی گرمی ہے۔ اور حاجی بجلی نا ہونے کے باعث حاجی اے سی بھی نہیں چلا سکتے ہیں۔ ایک اور خبر یہ کہ عورتوں اور مردوں کو ایک ہی کیمپ میں ٹھہرایا گیا۔مردوں کو اوپر ٹھہرایا گیا ہے۔ جبکہ عورتوں کو نیچے ٹھہرایا گیا ہے۔

اس تمام حوالے سے جب حاجیوں سے اس مطلق پوچھا گیا تو ان کا کہنا تھا کہ بجلی اور پانی کی عدم دستیابی کے علاوہ کھانے پینے کا بھی کوئی انتظام نہیں کیا گیا ہے۔حاجیوں کا یہ بھی کہنا تھا کہ ان مشکلات کا سامنا صرف پاکستانیوں کو ہی درپیش ہے۔ مزید یہ کہ حاجیوں نے بہت زیادہ حکومت پر بھی تنقید کی۔کہ حکومت بہت دعوے کرتی ہے۔لیکن پورے نہیں کرتی۔ حج کو پہلے سے زیادہ مہنگا کیا گیا۔ لیکن سہولت کوئی بھی فراہم نہیں کی گئی۔