شرح سود میں کمی،چین کے ساتھ معاہدے،پاکستانی معیشت کیلیے اچھی خبریں

0
61
econmy

اسٹیٹ بینک نے آج شرح سود میں کمی کی ہے، چار برسوں میں پہلی بار شرح سود میں کمی کی گئی، سٹیٹ بینک نے مالیاتی استحکام کے ذریعے حمایت یافتہ سخت مانیٹری پالیسی کے موقف کے درمیان بنیادی افراط زر میں کمی پر زور دیا۔

پاکستان اور چین نے ٹرانسپورٹ انفراسٹرکچر، صنعت، توانائی، زراعت، میڈیا، صحت، پانی اور سماجی اقتصادی ترقی سمیت متعدد شعبوں میں 23 مفاہمت کی یادداشتوں پر دستخط کیے ہیں۔ اس سے قبل نجی شعبے کے دوطرفہ تعاون کے ساتھ مزید 32 مفاہمت کی یادداشتوں پر دستخط کیے گئے۔

آئل اینڈ گیس ریگولیٹری اتھارٹی (اوگرا) نے تین ریفائنریوں کو جون اور جولائی 2024 میں 120,000 MT تک کم اور زیادہ سلفر فرنس آئل (HSFO) برآمد کرنے کی اجازت دی ہے۔

چینی CZK Huarui گروپ پاکستان میں مصنوعی ذہانت، سائنس اور ٹیکنالوجی، جدید زراعت، صحت کی دیکھ بھال، لاجسٹکس، انفراسٹرکچر میں سرمایہ کاری کرے گا جبکہ سپلائی چین مارکیٹ کے شعبوں میں مہارت حاصل کی جائے گی۔ چین کے تعاون سے پاکستان میں ای کامرس کو بڑھانا بھی اہم ایجنڈے میں شامل تھا جو کہ وقت کی اشد ضرورت ہے۔ چین سمندر میں گیس کی تلاش میں پاکستان کی مدد کرے گا۔

پاکستان اور روس نے 27ویں سینٹ پیٹرزبرگ انٹرنیشنل اکنامک فورم (SPIEF) کے موقع پر ریلوے کے شعبے میں تعاون کے مفاہمت نامے پر دستخط کیے۔اس مفاہمت نامے کے ذریعے، دونوں ممالک کا مقصد ریلوے کی اپ گریڈیشن کے منصوبوں اور اس اہم شعبے کے جدید خطوط پر استوار کرنے کے مواقع تلاش کرنا اور اس میں تعاون کرنا ہے ۔ اس ایم او یو کے تحت اس شعبے میں کام کرنے والی متعلقہ کمپنیوں کے درمیان مستقبل میں تعاون بھی ہوگا جبکہ اس کا مقصد بین الاقوامی کارگو ٹرانسپورٹ کو فروغ دینا اور سہولت فراہم کرنا ہے۔ مفاہمت پر دستخط H.E. پاکستان کی طرف سے سفیر محمد خالد جمالی اور روس کی طرف سے ڈپٹی ٹرانسپورٹ منسٹر مسٹر ڈی ایس زیویریف نے کیے

Leave a reply