پیرس کلب کے بعد 2 دوست ممالک سے پاکستان کو قرضوں میں ریلیف ملنے کا امکان

0
28

پیرس کلب کے بعد 2 دوست ممالک سے پاکستان کو قرضوں میں ریلیف ملنے کا امکان

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق پاکستان کو قرضوں میں مزید ریلیف ملنے کا امکان ہے، سعودی عرب اور چین نے بھی یکم مئی سے 31 دسمبر تک پاکستان کے قرضوں کی ادائیگیاں موخرکرنے کی یقین دہانی کروائی ہے

پاکستانی وزارت خزانہ کے حکام کے مطابق قرض کی ادائیگیاں موخر ہونے سے پاکستان کو مجموعی طور پر ایک ارب 80 کروڑ ڈالر کا ریلیف ملے گا اور اس سلسلے میں باقاعدہ اعلان آئندہ ہفتے متوقع ہے،وزارت خزانہ کے حکام کا کہنا ہے کہ متحدہ عرب امارات سے بھی قرض کی ادائیگیاں موخر کرنے کیلئے بات چیت جاری ہے اور آئندہ بجٹ یہ ادائیگیاں موخر سمجھ کر بنایا جا رہا ہے۔

واضح رہے کہ گزشتہ روز ترقی پذیر ممالک کو قرض فراہم کرنے والے ممالک پر مشتمل گروپ پیرس کلب نے پاکستان کا قرضہ موخر کرنے کا اعلان کیا تھا، پیرس کلب نے پاکستان کو قرضوں کی ادائیگی میں مہلت دینے کی منظوری دی تھی اور پاکستان کو باضابطہ طور پر ان ممالک میں شامل کر لیا گیا ہے جو قرض کی ادائیگی میں تاخیر کرسکتے ہیں۔

پیرس کلب کی جانب سے جاری اعلامیے میں کہا گیا تھا کہ یکم مئی سے 31 دسمبر 2020 تک پاکستان کا قرض موخر کر دیا گیا ہے، سہولت سے پاکستان کو قرضوں کی ادائیگی میں ریلیف مل سکےگا۔ اعلامیے کے مطابق کہ کرونا وائرس سے نمٹنے کے لیے پاکستان کا قرض موخر کیاگیا.

جی 20 گروپ اور فرانسیسی وزارت خزانہ کی معاونت سے کام کرنے والے پیرس کلب نے رواں سال اپریل میں 77 غریب ترین ممالک کی جانب سے رواں سال قرض کی ادائیگیوں کو روکنے پر رضا مندی ظاہر کی تھی تاکہ وہ ممالک کرونا وائرس کے خلاف جنگ میں موثر کردار ادا کرسکیں۔

آئی ایم ایف نے پاکستان کو بڑا ریلیف دے دیا

قبل ازیں آئی ایم ایف پاکستان کو قرضوں میں ایک سال کا ریلیف دے چکا ہے اور جی 20 ممالک نے بھی قرض منجمد کرنے پر رضا مندی ظاہر کی ہے .

کرونا وائرس، جی 20 ممالک کا قرضوں کی وصولی موخر کرنے کا فیصلہ

Leave a reply