fbpx

پرائس کنٹرول کمیٹی کا اجلاس ، نئی قیمتوں کا تعین کیا گیا

رمضان المبارک کے حوالے سے ڈسٹرکٹ پرائس کنٹرول کمیٹی کا اجلاس گزشتہ روز منعقد ہوا۔

اجلاس میں ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر ریونیو‘تمام اسسٹنٹ کمشنرز‘انجمن تاجران کے عہدیداران سمیت دیگر متعلقہ افسران نے شرکت کی

(غفار ریاض ، نمائندہ باغی ٹی وی قصور) اجلاس میں اشیائے ضروریہ کی نئی قیمتیں مقرر کی گئیں جن میں آٹا تھیلہ 20کلو گرام اوپن مارکیٹ 860روپے‘ آٹا تھیلہ 10کلو گرام 430روپے جبکہ رمضان بازار میں 375روپے‘بناسپتی گھی (پیکٹ کھلا) فی کلو گرام بمطابق نرخ نامہ گورنمنٹ، چاول سپر باسمتی نیا اوپن مارکیٹ125روپے جبکہ رمضان بازار میں 119روپے فی کلو گرام، چاول اری اوپن مارکیٹ40روپے جبکہ رمضان بازار میں 35روپے فی کلوگرام، دال چنا باریک اوپن مارکیٹ120روپے جبکہ رمضان بازار میں 110روپے فی کلو گرام، دال چنا موٹی اوپن مارکیٹ 130روپے جبکہ رمضان بازار میں 120روپے فی کلو گرام، دال مسور موٹی اوپن مارکیٹ130روپے جبکہ رمضان بازار میں 120روپے فی کلو گرام، دال مسور باریک لوکل اوپن مارکیٹ150روپے جبکہ رمضان بازار میں 140روپے فی کلو گرام، دال ماش (چمن موٹی)اوپن مارکیٹ میں 235روپے جبکہ رمضان بازار میں 225روپے فی کلو گرام، دال مونگ (موٹی) اوپن مارکیٹ 190روپے جبکہ رمضان بازار میں 180روپے فی کلو گرام،کالے چنے موٹے اوپن مارکیٹ 125روپے جبکہ رمضان بازار میں 115روپے فی کلو گرام،کالے چنے باریک اوپن مارکیٹ 120روپے جبکہ رمضان بازار میں 110روپے فی کلو گرام، سفید چنے موٹے اوپن مارکیٹ130روپے جبکہ رمضان بازار میں 120روپے فی کلو، سفید چنے باریک اوپن مارکیٹ میں 125روپے جبکہ رمضان بازار میں 115روپے فی کلو، بیسن اوپن مارکیٹ 130روپے جبکہ رمضان بازار میں 120روپے فی کلو گرام‘ چینی اوپن مارکیٹ 85روپے فی کلو جبکہ رمضان بازار میں بمطابق گورنمنٹ پالیسی، روٹی تندوری 100گرام 7روپے،نان 100گرام 10روپے، گوشت چھوٹا اوپن مارکیٹ 850روپے جبکہ رمضان بازار میں 820 روپے فی کلو، گوشت بڑااوپن مارکیٹ 450روپے جبکہ رمضان بازار میں 430روپے فی کلو، دودھ کھلا فی لیٹر 80روپے، دہی 90روپے فی کلو، اینٹ درجہ اول (فی ہزار)7ہزار روپے (بھٹہ موقع)‘گوشت برائلر، سبزی و فروٹ، انڈے فی درجن بمطابق نرخ نامہ مارکیٹ کمیٹی روزانہ کی بنیاد پر ہونگے۔ڈپٹی کمشنر قصور نے اس موقع پر ہدایت کی کہ تمام پرائس کنٹرول مجسٹریٹس رمضان المبارک میں ضلعی حکومت کے مقررہ کردہ ریٹس پر عملدرآمد کو یقینی بنائیں اور ناجائز منافع خوری کرنیوالوں کیخلاف سخت قانونی کاروائی عمل میں لائی جائے۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.