fbpx

قومی ویمین کرکٹ ٹیم بدھ سے ویسٹ انڈیز کے مد مقابل ہوگی

پاکستان ویمن کرکٹ ٹیم کی اگلے سال آئی سی سی ویمن ورلڈ کپ کوالیفائرراؤنڈ اورآئی سی سی ویمن ورلڈ کپ کی تیاریاں جاری ہیں، اس سلسلے میں بدھ کے روز پاکستان ویمن ٹیم کا مقابلہ ویسٹ انڈیزکی ویمن ٹیم سے ہونے جا رہا ہے، پانچ ایک روزہ میچوں پرمشتمل سیریز کا پہلا میچ انٹیگا کے کولیج کرکٹ گراؤنڈ میں بدھ کے روزکھیلا جا ئے گا، اس سال پاکستان ویمن ٹیم اپنا چوتھا ایک روزہ میچ کھیلنے جا رہی ہے، اس سے قبل پاکستانی ٹیم دورہ جنوبی افریقہ میں تین ایک روزہ میچ کھیل چکی ہے، پہلا ایک روزہ میچ کے علاوہ کولیج کرکٹ گراؤنڈ میں دوسرا اورپانچویں میچ بلترتیب 9 اور18 جولائی کو کھیلا جائے گا.
ندا ڈار نے اس سیریزکے دوران ٹی ٹونی وکٹوں کی سنچری مکمل کی ہے، 19 سالہ فاطمہ ثناء اورڈیانا نے چارچاروکٹیں حاصل کیں ہیں، ندا ڈارکی باؤلنگ نے مخالف ٹیم کے رنزروکنے میں اہم کردارادا کیا ہے.
جویریہ خان نے کہا کہ پاکستان ٹیم نے باؤلنگ کے شعبے میں بہترین کارکردگی کا مظاہرہ کیا ہے، اب ایک روزہ میچوں کی سیریزمیں بھی بہترنتائج حاصل کرنے کے لیے بیٹنگ لائن کوپرفارم کرنا ہو گا، جویریہ خان 2744 رنزبنا کرویمن ٹیم کی ایک روزہ میچوں کی کامیاب ترین بلے باز ہیں، یہ پانچ میچ ہمارے لیے بہت اہم ہیں، ان میچزسے ورلڈ کپ کوالیفائرمرحلے اوراگلے سال ویمن ورلڈ کپ کی تیاریوں کے سلسلے میں مدد ملے گی، بیٹنگ لائن کے پرفارم کرنے سے اچھے نتائج حاصل کیے جا سکتے ہیں، ٹی ٹونٹی سیریزسے ہمیں بیٹنگ کنڈیشنزکوسمجھنے میں کافی مدد ملی ہے، ہم ایک روزہ سیریزمیں بہترپرفارم کریں گی، بیٹسمینوں کو مشکل حالات میں خود کو پرسکوں رکھنےکی کوشش کرنا ہوگی، ٹی ٹونی میں شکست پرجویریہ خان کا کہنا تھا، ہم نے میچزجیتنے کے لیےسخت محنت کی تھی، ہم نے بیٹنگ پر بہت کام کیا تھا، بدقسمتی سے ہم ایک یونٹ کی طرح پرفارم کرنے میں ناکام رہے ہیں، لیکن ہماری باؤلنگ نے بہت اچھی پرفارمنس کا مظاہرہ کیا جو کہ ایک خوش آئند عمل ہے، نڈا ڈا اورانعم امین بہت اچھی کارکردگی کا مظاہرہ کررہی ہیں، فاطمہ ثناء ایک نوجوان کے طور پریشرمیں حالات کوبرداشت کرنے کی صلاحیت رکھتی ہیں۔
پاکستان ویمن اے ٹیم کی تین میچوں پر مشتمل ایک روزہ سیریز کا آغاز ہفتے سے ہوگا، قومی اے ٹیم ہفتہ کو دوبارہ ایکشن میں نظر آئے گی۔ اس سے قبل قومی اے ٹیم تین ٹی ٹونی میچوں پرمشتمل سیریزمیں ویسٹ انڈیز کی اے ٹیم کو شکست دے چکی ہے، قومی اے ٹیم کی اوپنرعائشہ ظفرنے ایک ہاف سنچری کی مدد سے 93 رنز بنائے ہیں، کائنات امتیازنے چاروکٹیں حاصل کیں ہیں، رامین شمیم، ماہم طارق اورایمن انورنے تین تین وکٹیں حاصل کیں ہیں، رامین پاکستان اے ٹیم کی قیادت کا سلسلہ جاری رکھیں گی.
اسکواڈ میں جویریہ خان (کپتان، قومی ٹیم)، رامین شمیم (ون ڈے کپتان، اےٹیم)، سدرہ نواز(ٹی 20 کپتان، اے ٹیم)، عالیہ ریاض، ایمن انور، انعم امین، عائشہ نسیم، عائشہ ظفر، ڈیانا بیگ، فاطمہ ثناء، ارم جاوید، جویریہ رؤف، کائنات امتیاز، کائنات حفیظ، ماہم طارق، منیبہ علی صدیقی(وکٹ کیپر)، ناہیدہ خان، ناجیہ علوی(وکٹ کیپر)، نشرہ سندھو، نتالیہ پرویز، ندا ڈار، عمائمہ سہیل، صبا نذیر، سعدیہ اقبال، سدرہ امین، اورسیدہ عروب شاہ کو شامل کیا گیا ہے.