توشہ خانہ فوجداری کیس میں عمران خان کی اپیل پر سماعت آج ہو گی

اسلام آباد ہائیکورٹ کے فیصلے کے خلاف درخواست پر سماعت دوپہر 2 بجے ہو گی
0
31
tosha imran

اسلام آباد: توشہ خانہ فوجداری کیس میں اسلا آباد ہائیکورٹ کے فیصلے کے خخلاف چیئرمین پی ٹی آئی عمران خان کی سزا کے خلاف اپیل اور سزا معطلی کی درخواست پر سماعت آج بھی ہوگی۔

باغی ٹی وی : تفصیلات کے مطابق چیف جسٹس عمرعطا بندیال کی سربراہی میں سپریم کورٹ کا 3 رکنی بینچ سماعت کرے گا اسلام آباد ہائی کورٹ میں الیکشن کمیشن کے وکیل آج دلائل دیں گے چیئرمین پی ٹی آئی کی توشہ خانہ کیس میں اسلام آباد ہائیکورٹ کے فیصلے کے خلاف درخواست پر سماعت دوپہر 2 بجے ہو گی-

گزشتہ روز دوران سماعت چیف جسٹس نے ریمارکس دیئے تھے کہ توشہ خانہ کیس میں ٹرائل کورٹ کا حکم درست نہیں، ٹرائل کورٹ کے جج نے جلد بازی میں فیصلہ کیا ہائیکورٹ نے توشہ خانہ کیس پر 7 دن میں فیصلہ کرنے کا کہا اور ٹرائل کورٹ نے ایک ہی دن میں فیصلہ کر دیا، اگر کوئی فیصلہ غلط ہے تو اس میں مداخلت کر سکتے ہیں۔

ملک کے مختلف حصوں میں بارشوں کی پیشگوئی

سماعت کے دوران عمران خان کی جانب سے وکیل لطیف کھوسہ نے چیف جسٹس اسلام آباد ہائیکورٹ عامر فاروق کے خلاف عدم اعتماد کی درخواست دائر کرتے ہوئےکہا کہ ہائیکورٹ نے 4 اگست کو درخواستوں پر فیصلہ دیا، 5 اگست کو ٹرائل کورٹ کے جج ہمایوں دلاور نے ہمارے خلاف فیصلہ دے دیا،جسٹس جمال مندوخیل نے ریمارکس دیئے کہ سیشن عدالت کے خلاف کوئی حکم امتناع نہیں تھا، اس نے فیصلہ ہی کرنا تھا۔

غریب بچے اچانک خوشی سے جھوم اٹھے، جب ایک ٹوٹا کھلونا کباڑ سے نکلا

دوسری جانب توشہ خانہ فوجداری کیس میں چیئرمین پی ٹی آئی کی سزا کے خلاف اپیل اور سزا معطلی کی درخواست پر سماعت آج ہو گی اسلام آباد ہائیکورٹ کے چیف جسٹس عامر فاروق اور جسٹس طارق جہانگیری پر مشتمل ڈویژنل بینچ کیس کی سماعت کرے گا اسلام آباد ہائیکورٹ میں الیکشن کمیشن کے وکیل آج دلائل دیں گے عدالت نے گزشتہ روز اٹک جیل حکام کو چیئرمین پی ٹی آئی سے وکلا بابر اعوان اور لطیف کھوسہ کو ملاقات کی اجازت دی تھی۔

خیبرپختونخوا کی نگران کابینہ کے 9 وزراء کو ذمہ داریاں سونپ دی گئیں

جبکہ چیئرمین پی ٹی آئی نے اسلام آباد ہائیکورٹ پر عدم اعتماد کرتے ہوئے سپریم کورٹ سے رجوع کر رکھا ہے اور اپنےکیسز، ٹرائل اور انکوائریاں اسلام آباد ہائیکورٹ سے لاہور یا پشاور ہائیکورٹ منتقل کرنے کی درخواست دائر کی ہے۔

Leave a reply