امیتابھ بچن کی نوبہترین فلموں‌ کے نو بہترین ڈائیلاگز

0
43

بالی وڈ فلم انڈسٹری کے بادشاہ اور شہنشاہ کے نام سے جانے جانے والے میگا اسٹار امیتابھ بچن آج 80 سال کے ہوگئے ہیں۔ امیتابھ بچن نسل در نسل لوگوں کے دلوں پر راج کر رہے ہیں۔امیتابھ بچن نے سنجیدہ کردار بھی نبھائے اور پلکے پھلکے کردار بھی نبھائے. ان کی سالگرہ کے موقع پر ہم ان کی کچھ بہترین فلموں کے کچھ بہترین ڈائیلاگز آپکو یاد کررہے ہیں. فلم دیوار جو کہ 1975 میں ریلیز ہوئی اس میں ان کا ایک ڈائیلاگ ہے ” آج میرے پاس بنگلہ ہے، گاڑی ہے، بینک بیلنس ہے، کیا ہے تمہارے پاس؟ ان کا یہ ڈائیلاگ آج بھی بولا جاتا ہے. دوسرے نمبر پر ہے فلم شعلے کا ڈائیلاگ ” تمھارا نام کیا ہے، بسنتی؟” . تیسرے نمبر ہے فلم کبھی کبھی اس کا ڈائیلاگ ہے ” کبھی کبھی

میرے دل میں خیال آتا ہے، کی زندگی تیری زلفوں کی نرم چھاؤں میں گزرنے پتی سے شاداب ہو بھی سکتی تھی”.
چوتھے نمبر پر ہے فلم ڈان کا ڈائیلاگ ” ڈان کو پکڑنا مشکل ہی نہیں، ناممکن ہے”. پانچویں نمبر پر ہے فلم سلسلہ کا یہ ڈائیلاگ ” میں اور میری تنہائی، اکثر یہ بات کرتے ہیں”. چھٹے نمبر پر ہے فلم کالیا کا ڈائیلاگ ” ہم جہاں کھڑے ہو جاتے ہیں، لائن واہی سے شورو ہوتی ہیں”. ساتویں نمبر پر ہے فلم نمک حلال کا یہ ڈائیلاگ ” میں انگریزی بول سکتا ہوں، میں انگریزی چل سکتا ہوں، میں انگریزی ہنس سکتا ہوں کیونکہ انگریزی بہت ہی گھٹیا زبان ہے”۔آٹھویں نمبر ہے ہے فلم شہنشاہ کا یہ ڈائیلاگ” رشتے میں تو ہم تمہارے باپ لگتے ہیں، نام ہے شہنشاہ”۔نویں نمبر پر ہے ان کی فلم سرکار کا یہ ڈائیلاگ ” مجھے جو صحیح لگتا ہے میں کرتا ہوں، پھر چاہے بھگوان کے خلاف ہو، قانون کے خلاف ہو یا خالص نظام کے خلاف”۔

Leave a reply