fbpx

آرمی چیف آج سندھ کے سیلاب زدہ علاقوں کا دورہ کریں گے

پاک فوج نے سیلاب زدگان کی مدد کے لیے فلڈ ریلیف ڈونیشن اکاؤنٹ قائم کر دیا ہے

فلڈ ریلیف اپ ڈیٹ: آرمی چیف آج سندھ کے سیلاب زدہ علاقوں کا دورہ کریں گے اور امدادی سرگرمیوں میں مصروف زمینی دستوں سے بات چیت بھی کریں گے۔

باغی ٹی وی : آئی ایس پی آر کے مطابق پاک فوج نے سیلاب متاثرین کی مدد کے لیے 212 ریلیف کولیکشن پوائنٹس قائم کیے ہیں۔ سندھ میں 81، پنجاب میں 73، بلوچستان میں 41 اور کے پی کے میں 17 ریلیف کولیکشن پوائنٹس کام کر رہے ہیں۔

پاک فوج نے سیلاب زدگان کی مدد کے لیے فلڈ ریلیف ڈونیشن اکاؤنٹ قائم کر دیا ہے اکاؤنٹ کا عنوان – سیلاب متاثرین کے لیے آرمی ریلیف (عسکری بینک جی ایچ کیو برانچ)
اکاؤنٹ نمبر – 00280100620583

پاک فوج کی جانب سے ضلع راجن پور میں امدادی سرگرمیاں جاری

بلوچستان:

آئی ایس پی ار کے مطابق پاک فوج اور فرنٹیئر کور نے کوئٹہ، مسلم باغ، چمن، سوئی، ڈیرہ بگٹی، سبی، لہری، نصیر آباد، بیلہ، اُٹھل اور جعفر آباد کے علاقوں میں امدادی کیمپ قائم کیے جو کہ خوراک اور دیگر سہولیات فراہم کر رہے ہیں۔ سیلاب متاثرین کے لیے کوئٹہ، مسلم باغ، سوئی، ڈیرہ بگٹی، سبی، دوبندی، لہری، سدوری، لکڑہ ضلع لسبیلہ میں فری میڈیکل کیمپ لگائے جا رہے ہیں۔

پنجاب:
آئی ایس پی آر کے مطابق ڈیرہ غازی خان، روجھان اور لیہ میں ریسکیو اور ریلیف آپریشنز کیے گئے جہاں پاک فج کے جوانوں نے پھنسے ہوئے خاندانوں کو خوراک اور دیگر سہولیات فراہم کیں۔ ضلع راجن پور میں ہیلی کاپٹر کے ذریعے امدادی اور بچاؤ کی کوششیں کی گئیں جن میں ہرڑ تحصیل جام پور، نور پور ماجھو والا تہہ جام پور، موضع کان والا تہہ جام پور، ماڑی جام پور، دربار سخی بور جام پور، بمبلی جام پور، بستی نوخمی جام پور، ڈیرہ شامل ہیں۔ روجھان، ڈیرہ جیون تحصیل روجھان، چک مٹ نمبر 2 تحصیل روجھان شامل ہیں-

سوات میں پھنسے 110 افراد کو پاک فوج نے ریسکیو کر لیا

سندھ:

آئی ایس پی آر کے مطابق پاک فوج نے ضلع خیرپور، ضلع لاڑکانہ، ضلع نوشہرو فیروز، ضلع شکارپور، ضلع قمبر شداد کوٹ، ضلع جیکب آباد، ضلع کشمور، ضلع بدین، ضلع میر پور خاص، ضلع سانگھہ، ضلع مٹیاری، ضلع عمرکوٹ، میں ریسکیو اور ریلیف آپریشن کیا۔ ضلع حیدرآباد، ضلع ٹنڈو محمد خان، ضلع ٹھٹھہ، ضلع جامشورو، ضلع بدین، ضلع سجاول، ضلع دادو۔ بدین، سجاول، ٹھٹھہ اور عمرکوٹ میں 4x میڈیکل کیمپ لگائے گئے۔ بدین، سجاول، ٹھٹھہ اور عمرکوٹ میں 1700 سے زائد مریضوں کا علاج کیا گیا۔

خیبرختونخوا:

آئی ایس پی آر کے مطابق خیبرختونخوا کے سیلاب سے متاثرہ علاقوں میں 150 افراد کے لیے امدادی کیمپ قائم کیے گئے ہیں اٹک اور ایبٹ آباد میں فوج کی فارورڈ تعیناتی کی گئی ہے۔ سیلاب سے متاثرہ علاقوں میں 4x فیلڈ میڈیکل کیمپ لگائے گئے جہاں 715x مریضوں کا علاج کیا گیا۔ چارسدہ میں سیلاب متاثرین کے لیے 7x ریلیف کیمپ قائم کیے گئے جبکہ نوشہرہ اضلاع کی ہر تحصیل میں 3x ریلیف کیمپ قائم کیے گئے۔ سول انتظامیہ کو ضروری مدد فراہم کی جا رہی ہے۔

سوات میں پھنسے 110 افراد کو پاک فوج نے ریسکیو کر لیا