آصف علی زرداری کے پیر، سید اعجاز شاہ کے اہم انکشافات

0
109
pir syed ijaz shah

نجی ٹی وی سے گفتگو میں پیر سید اعجازشاہ نے کہا کہ آصف علی زرداری پسند نہیں کرتے تھے کہ میں میڈیا پر آؤں میرا خیال ہے کہ میں پہلی بار میڈیا پر آیا ہوں، میں تو فقیر ہوں میرا چھوٹا سا دربار ہے، مجھے میرے خواب میں میرے ہی پیر صاحبٓ کی جانب سے مجھے حکم ہوا کہ ایک آدمی سندھ سے آیا ہے اور اس سے رابطہ کرو جبکہ وہ مصیبت میں ہے۔ آصف علی زرداری پر جب فرد جرم عائد ہوئی تو مجھے معلوم ہوا تو میں اٹک قلعے گیا جہاں وہ قید تھے۔

انہوں نے نے نجی ٹی وی کے انٹرویو میں بتایا کہ میں اٹل قلعے میں داخل ہوگیا اور صبح کا وقت تھا بس میں اندر داخل ہوگیا جبکہ یہ تو راز کی بات ہے۔ ایک بجے پولیس آئی تو پوچھا کہ کوئی مہمان آرہا ہے تو انہوں نے کہا کہ آرہا ہے۔ جیسے مزید آگے بڑھا اندر داخل ہوا اور دروازہ کھولا جبکہ اندر صدر صاحب موجود تھے سلام کیا تو مسکرائے پھر پریشان ہوگئے۔ علاوہ ازیں پیر سید اعجازشاہ نے کہا کہ میں جاکر بیٹھا گیا سماعت ہورہی تھی وہاں آٹھ یا نو آدمی تھے جبکہ آصف علی زرداری نے اپنے ہمراہ ایک آدمی سے میرے بارے میں پوچھا کہ یہ کون ہے اور کیسے آیا ہے۔ میں چند لائینیں لکھیں کردیں۔ لکھا تھا کہ میں آیاہوں فقیر آدمی ہوں آپ کامعاملہ میرے سپرد کیا جارہا ہے اور آپ بھی دعا کریں دیکھنا آپ بھی کہ کیا نتائج نکلتے ہیں۔

پیر اعجاز شاہ نے مزید بتایا کہ ایک ماہ بعد میں پنڈی میں احتساب عدالت گیا جبکہ وہاں ملاقات ہوئی اور آصف علی زرداری نے ایک آدمی سے کہا کہ انہیں آپ جانے کا کرایہ دیں تو میں نے کہا کہ سر میں کرایہ نہیں لوں گا جب تک آپ کا معاملہ حل نہیں ہوتا۔ جب ان کے ساتھ معاہدہ لکھا تو میں نے کہا کہ آپ یہ معاملہ یہاں سے نہیں مدینہ سے حل ہوگا۔ اس کے بعد میں مدینے گیا اور وہاں ان کے لئے دعا کی۔
مزید یہ بھی پڑھیں؛
ریلوے کیرج فیکٹری کو آؤٹ سورس کرنے کا منصوبہ
ایلون مسک کا ایک بار پھر مارک زکربرگ کیساتھ ایم ایم اے فائٹ کا عندیہ
طالبان نے لڑکیوں پر کلاس 3 سے آگے پڑھنے پر بھی پابندی عائد کردی
پی آئی اے کی لینڈنگ کی وجہ سے سالانہ 71 ارب کا نقصان ہو رہا ہے،اسحاق ڈار
ہمارے دو تین دن رہ گئے، ڈر تھا کہ کوئی حادثہ نہ ہو جائے اور ایسا ہی ہوا،سعد رفیق

سابق صدر کے پیر سید اعجازشاہ نے کہا کہ جب ایوان صدر میں پہلی افطاری تھی تو صحافی حامد میر نے مجھ سے پوچھا کہ چاچا اگلی افطاری بھی ہوگی کہ نہیں، میں نے کہا کہ میں بیٹھا ہوں۔ جبکہ انہوں نے مزید کہا کہ آصف علی زرداری کی صدارت کو دور ختم ہوا تھا تو اس وقت سے ابتک میں اس جانب ہی نہیں گیا۔ کچھ لوگ ہیں جو اس طرح جھوٹی افواہیں پھیلاتے ہیں علاوہ ازیں پیر سید اعجازشاہ نے حال میں گرفتار ہونے والے چئیرمین پی ٹی آئی کے بارے میں کہا کہ جب میں مدینہ پہنچا میں نے کہا کہ اسکی فائلیں کھل گئیں ہیں یہ جارہا ہے، میں لیگی رہنما شاہد خاقان عباسی کو میسج بھیجا کہ یہ حکومت چلی گئی ہے۔

Leave a reply