fbpx

سرگودھا ڈویژن کے چیئرمین حسن انعام پراچہ کی درخواست پر بھیرہ شہر کو تاریخی ورثہ قرار دینے کے لئے سروے کا حکم دے دیا ہے

بھیرہ وزیراعلی پنجاب عثمان بزدار نے شکایت سیل سرگودھا ڈویژن کے چیئرمین حسن انعام پراچہ کی درخواست پر بھیرہ شہر کو تاریخی ورثہ قرار دینے کے لئے سروے کا حکم دے دیا ہے وزیر اعلی کے حکم پر ڈپٹی ڈائریکٹر وال سٹی لاہور اتھارٹی مبشر حسن نے شہر کے تاریخی مقامات کا سروے کیا تحریک انصاف تحصیل بھیرہ کے جنرل سیکرٹری چوہدری خالد محمود ارائیں کی رہائش گاہ پر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے مبشر حسن نے بتایا کہ بھیرہ شہر کی تاریخی اہمیت سے انکار نہیں قبل مسیح سے آباد اس شہر کو شیر شاہ سوری نے نئے سرے سے آباد کیا اس دور میں تعمیر ہونے والی جامع مسجد بگویہ بھیرہ۔ اورنگزیب عالمگیر کے دور میں تعمیر ہونے والے حافظانی مسجد۔بدھ دور کے مندر سکھ دور کا گردوارہ اور ملکہ وکٹوریہ عہد میں تعمیر ہونے والے تاریخی دروازے اب تک اپنی اصلی حالت میں موجود ہیں جن کی حفاظت اور بحالی کے لیے وزیر اعلی پنجاب نے حسن انعام پراچہ کی درخواست خصوصی احکامات جاری کیے ہیں تاکہ تاریخی ورثہ کو محفوظ کیا جا سکے انہوں نے کہا کہ شہر کی تاریخ کو مسخ نہ کیا جائے اور اسے اس کی اصل حالت میں بحال کرنے کے لئے عوام کا تعاون ازحد ضروری ہے اس موقع پر چوہدری نوید جاوید،مہر محمد بلال طاہری،محمد عظمت اقبال،چوہدری امیر معاویہ،محمد عاطف اقبال،عطالرحمن،گادی ویلفیئر کے چیئرمین چوہدری محمد فاروق سابق ارکان بلدیہ چوہدری محمد ریاض گادی،مہر محمد بشیر،چوہدری شفیق الرحمن انصاری اور چوہدری صابر علی بھی موجود تھے مبشر حسن نے شہر کے تاریخی مقامات ریلوے اسٹیشن کا سروے کیا انہوں نے یقین دلایا کہ سروے رپورٹ کی منظوری کے بعد ان تاریخی آثار کی بحالی کے لیے کام شروع کر دیا جائے گا

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.