بے روزگاری سے تنگ کیمرہ مین نے دال ٹکی کی ریڑھی لگالی

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق پنجاب کے دارالحکومت لاہور میں بیشتر مرکزی و مقامی نیوز چینلوں میں 12 سال تک بطور کیمرہ مین کام کرنے والے خرم سندھو نے دال ٹکی اور نان کی ریڑھی لگالی۔

ان کا کہنا ہے کہ وہ کئی نیوز چینلوں میں کام کرنے کے بعد محنت سے سینیئر کیمرہ مین کے عہدے تک پہنچے، لیکن اب مالی بحران کا بہانہ بنا کر چینل مالکان نے سینکڑوں ملازمین کی طرح انہیں بھی نوکری سے فارغ کر دیا۔

خبر رساں ادارے انڈپینڈنٹ اردو کے مطابق خرم کا کہنا ہے کہ انہیں تین ماہ قبل ‘آپ نیوز’ سے نکالا گیا جبکہ تنخواہ کی مد میں ان کے تین ماہ کے بقایاجات بھی ادا نہیں کیے گئے۔ خرم نے انڈپینڈنٹ اردو کو بتایا کہ جب وہ نوکری ہونے کے باوجود کئی ماہ کی تنگدستی کے دوران نوکری سے فارغ کیے گئے تو ان پر قرضہ چڑھا ہوا تھا۔

انہوں نے تین ماہ تک نوکری تلاش کی لیکن جب کوئی بات نہ بنی تو پھر دوستوں سے ادھار پکڑ کر یہ کام شروع کر دیا ،اس سوال کے جواب میں کہ انہوں نے یہ کام کہاں سے سیکھا؟ خرم نے ٹھنڈی آہ بھرتے ہوئے کہا ،ضرورت ایجاد کی ماں ہے۔ جب سر پر پڑی تو خود ہی دال ٹکی تیار کی اور جب پہلے ہی دن کھانے والوں نے تعریف کی تو حوصلہ ملا۔’

بقول خرم پہلے دن انہیں خوف تھا کہ ان کی تیار کردہ نان ٹکی اگر لوگوں نے خرید کر نہ کھائی تو وہ ادھار کے پیسوں سے لاگت کیسے پوری کریں گے شکر ہے کہ پہلے ہی دن خرچ کی گئے پیسے پورے ہوگئے اور اب آہستہ آہستہ آمدنی میں اضافہ ہو رہا ہے۔ انہوں نے جن صحافتی لیڈروں کے جھنڈے اٹھائے اور دفاتر میں مخالفت کے باوجود انہیں ہر الیکشن میں کامیاب کرانے کی جدوجہد کی، انہوں نے فون کرکے کبھی حال بھی نہیں پوچھا۔

گفتگو کے دوران خرم نے سوال کیا کہ جو چینل مالکان مالی بحران کا رونا رو کر کارکنوں کو بے روزگار کر رہے ہیں، ان میں سے کتنے مالکان نے ریڑھیاں لگائی ہیں؟

لاک ڈاؤن، فاقوں سے تنگ بھارتی شہریوں نے ترنگے کو پاؤں تلے روند ڈالا

کرونا مریض اہم، شادی پھر بھی ہو سکتی ہے، خاتون ڈاکٹر شادی چھوڑ کر ہسپتال پہنچ گئی

کرونا لاک ڈاؤن، رات میں بچوں نے کیا کام شروع کر دیا؟ والدین ہوئے پریشان

لاک ڈاؤن ہے تو کیا ہوا،شادی نہیں رک سکتی، دولہا دلہن نے ماسک پہن کے کر لی شادی

کوئی بھوکا نہ سوئے، مودی کے احمد آباد گجرات کے مندروں میں مسلمانوں نے کیا راشن تقسیم

مقبوضہ کشمیر میں لگی آگ بھارت میں پھیل چکی،کرونا کے حوالہ سے دو ہفتے اہم، عوام احتیاط کریں، ترجمان پاک فوج

کرونا لاک ڈاؤن، شادی کی خواہش رہی ادھوری، پولیس نے دولہا کو جیل پہنچا دیا

ساتھ ہی انہوں نے پریس کلبوں اور گھروں میں بیٹھے بے روزگار میڈیا کارکنوں کو مشورہ دیا کہ حکومت، مالکان یا صحافی تنظیموں کےلیڈر کسی کے لیے کچھ نہیں کریں گے، وہ اپنا اور بچوں کا پیٹ پالنے کے لیے باہر نکلیں اور شرم و بھرم چھوڑ کر رزق حلال کی کوشش کریں، اسی طرح ان کی بے روزگاری ختم ہوگی۔

کرونا وائرس سے پاکستان میں پہلے صحافی کی موت

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.