بشری انصاری نے مجسٹریٹ سے کردی التجا

0
23

اداکارہ بشری انصاری نے ایک وڈیو پیغام جاری کرتے ہوئے کہا ہے کہ ڈاکٹر عامر لیاقت کے پوسٹ مارٹم کا فیصلہ واپس لیا جا نا چاہےے او ر وہ جو عام شہری ہے جو کہ اب خاص بن گیا ہے اس کو ایک سائیڈ پر کرکے عامر لیاقت کی فیملی کو اہمیت دی جائے جب وہ نہیں چاہتے کہ ان کے باپ کا پوسٹ مارٹم ہو تو نہیں کیا جانا چاہیے۔ہو سکتا ہے ان کی فیملی مزید طعنوں سے بچنے کےلئے ایسا کہہ رہی ہو کہ پوسٹ مارٹم نہیں ہونا چاہیے ۔بشری انصاری نے مزید کہا کہ عامر لیاقت کی یقینا غلطیاں تھیں جن کا خمیازہ انہی نے سب سے زیادہ بھگتا یہاں تک کہ مر گیا لیکن سوشل میڈیا نے ان کی غلطیوں کو بہت اچھے سے اجاگر کیا ،سوشل میڈیا تو لوگوں کی زندگیاں برباد کرنے کا زریعہ بن چکا ہے لوگ کسی کو اتنا ذلیل کرتے ہیں کہ وہ موت کو ہی گلے لگا لے۔

عامر لیاقت حسین کے بچے اور پوری فیملی اس وقت شدید تکلیف کا شکار ہے پتہ نہیں ابھی انہیں کس کس طعنے کا سامنا کرنا ہے کہ تمہارا باپ ایسا تھا ویسا تھا ۔بچوں کی تکلیف کو سمجھیں اور ایک شخص دنیا سے چلا گیا ہم نے اس کا عروج بھی دیکھا اور ذوال بھی دیکھا تو وہ اپنی جان پر سب کچھ سہہ گیا اب اس کی جان چھوڑ دیں اس کو بخش دیں، اور میں مجسٹریٹ سے التجاءکرتی ہوں کہ ڈاکٹر عامر لیا قت حسین کے پوسٹ مارٹم کا جو فیصلہ ہے اسے واپس لیا جائے ان کے بچوں کو جینے دیں عامر لیاقت اور ان کی فیملی کے لئے بس دعا کیجیے

Leave a reply