fbpx

چین کی راہ میں روڑے اٹکانے والوں کی پالیسیاں غلط ہیں. وزیر اعظم

وزیر اعظم شہباز شریف نے کہا ہے کہ چین کی راہ میں روڑے اٹکانے والوں کی پالیسیاں غلط ہیں۔

وزیر اعظم شہباز شریف نے بیجنگ میں سی جی ٹی این کو دیئے گئے خصوصی انٹرویو میں کہا کہ چین کے دورے کی دعوت میرے لیے باعث عزت ہے جبکہ دونوں ملک سی پیک اور باہمی سرمایہ کاری کے منصوبوں کو فروغ دیں گے۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان اور چین کی دوستی میں خلل ڈالنے کی کوئی کوشش کامیاب نہیں ہوسکتی جبکہ چینی قیادت کے ساتھ سرمایہ کاری، سی پیک اور جیو پولیٹیکل اسٹریٹجی پر مفید مذاکرات ہوئے۔

شہباز شریف نے کہا کہ چین اور ہماری دوستی ناقابل تسخیر ہے اور چین کا بیانیہ ترقی، خوشحالی اور امن ہے۔ دونوں ممالک کی دوستی اور باہمی اعتماد مضبوط تعلقات کا عکاس ہے۔ انہوں نے کہا کہ چین ہمیشہ سے خوشحال اور امیر ملک ہے۔ جو چین کی راہ میں روڑے اٹکانا چاہتے ہیں ان کی پالیسیاں غلط ہیں۔
مزید یہ بھی پڑھیں؛ ٹوئٹر ملازمین کونکالنے سے امریکا کے وسط مدتی انتخابات پر بھی منفی اثرات پڑنے کا واضح خدشہ چین اور سعودیہ نے حکومت کو 13ارب ڈالر کے مالی پیکیج کی یقین دہانی کرادی
ایف آئی آرکے اندراج کیلئے تھانے میں موجود ہیں ، پولیس درخواست وصول ہی نہیں کر رہی،زبیر خان نیازی
واضح رہے کہ وزیر اعظم شہباز شریف دو روز قبل چین کا دورہ مکمل کرنے کے بعد وطن واپس پہنچے ہیں۔ حکومت کی جانب سے جاری کردہ اعلامیہ کے مطابق دورے میں پاک چین اسٹریٹیجک پارٹنر شپ مزید بڑھانے پر اتفاق کیا گیا جبکہ شہبازشریف نے سی پیک کے اعلیٰ معیار کی ترقی کے عزم کا اعادہ کیا۔ وزیر اعظم نے ون چائنا پالیسی کی حمایت کی جبکہ دونوں ملکوں نے ریلوے لائن منصوبے ایم ایل ون پر کام شروع کرنے پر اتفاق کیا گیا۔