وزیراعلیٰ پنجاب کا صفائی مہم میں شامل عملے کو ایک ماہ کی تنخواہ انعام دینے کا اعلان

0
167
maryam

وزیراعلی پنجاب مریم نواز شریف نے تین روزہ خصوصی صفائی مہم میں شامل عملے کے لیے ایک ماہ کی تنخواہ بطور انعام دینے کا اعلان کیا ،وزیر اعلی پنجاب نےعید صفائی مہم کی تمام ٹیم کو پیغام دیا کہ "شاباش ٹیم پنجاب، شاباش”، آپ نے عوام کی مثالی خدمت کرکے ستھرا پنجاب کی نئی تاریخ لکھ دی،شدید گرمی میں جس طرح آپ نے عوام کی خدمت کی، وہ قابل تعریف اور قابل فخر ہے،

وزیراعلیٰ پنجاب مریم نواز نے صفائی مہم میں شریک تمام میونسپل اداروں، ویسٹ مینجمنٹ کمپنیوں، ضلعی انتظامیہ، لاہور ویسٹ مینجمنٹ کمپنی کے افسران اور عملے کو خراج تحسین پیش کیا، وزیر بلدیات ذیشان رفیق اور سیکرٹری وزارت بلدیات محمد شکیل کے کام کو بھی سراہا۔ وزیراعلیٰ پنجاب مریم نواز کا کہنا تھا کہ عید کے تین دن میں ستھرا پنجاب کی مہم نے ہر روز عوامی خدمت کا ایک نیا ریکارڈ بنایا، عیدالاضحٰی پر 72 گھنٹے میں مسلسل صفائی، عرق گلاب ملے پانی سے سڑکوں، گلیوں اور راستوں کی دھلائی کر کے سرکاری مشینری نے ناممکن کو ممکن کر دکھایا،آپ کے ٹیم ورک نے عوامی خدمت اور یہ ممکن ہے کی سنہری اور قابل فخر مثال قائم کر دی، بڑی عید پر صفائی کا بڑا سٹینڈرڈ بنا جسے قائم رکھنا ہے، سالڈ ویسٹ مینجمنٹ کا جامع نظام لا رہے ہیں، سب اپنی ذمہ داری نبھا کر ستھرا پنجاب کو حقیقت بنائیں گے، شہریوں اور میڈیا کا بھی شکریہ جن کے تعاون سے یہ ممکن ہوا، سب نے اپنی ذمہ داری خوب نبھائی جس کی وجہ سے نا ممکن ممکن ہوا، ستھرا پنجاب نعرہ نہیں رہا، پنجاب کی حکومت اور عوام نے کر کے دکھایا ہے۔

پہلی بار صفائی ستھرائی کی نگرانی کے لئے لاہور میں سیف سٹی کیمروں اور ڈرون کی جدید ٹیکنالوجی کا استعمال، سرکاری شعبے میں سینیٹشن کے جدید رجحان کی نئی روایت کا آغاز

پہلی بار لاہور نہر کی ڈرون سے نگرانی، نہر میں گندگی پھینکنے میں بڑی کمی
ڈرون نگرانی سے نہر میں گندگی اور آلائشیں پھینکنے میں 80 فی صد کمی آئی،چیف سیکرٹری لاہور نے لاہور کے مختلف علاقوں کا دورہ، صفائی کے انتظامات کا معائنہ کیا ،چیف سیکرٹری پنجاب نے شدید گرمی میں محنت اور فرض شناسی سے کام کرنے والے عملے میں وزیر اعلیٰ مریم نواز شریف کی طرف سے تحائف بھی تقسیم کئے ،لاہور ویسٹ مینجمنٹ کمپنی نے چار ڈرونز کی خصوصی ٹیمیں ۔نگرانی پر مامور کی تھیں،لاہور ویسٹ مینجمنٹ کمپنی نے پہلی بار ڈرون اور سیف سٹی کیمروں کا صفائی مہم کے لئے بھی استعمال کیا ،نہر میں گندگی پھینکنے پر 30 ایف آئی آرز درج، 2 لاکھ 80 ہزار کے جرمانے کئے گئے،ہزاروں شہریوں کو خلاف ورزیوں پر وارننگ بھی دی گئی ،4 ہزار 999 چھاپے مارے گئے، 85 کا چالان، 560 شہریوں کو خلاف ورزی پر نوٹس جاری ہوئے.

وزیر بلدیات عید کے تینوں ایام میں فیلڈ میں متحرک رہے
وزیرآباد میونسپل کمیٹی کی کارکردگی پر برہمی کا اظہار، چیف آفیسر اور سینٹری انسپکٹر معطل
وزیراعلی مریم نواز شریف کی زیرنگرانی پنجاب بھر میں عیدالاضحٰی کے تینوں ایام میں صفائی برقرار رکھنے کا محکمہ بلدیات کا آپریشن کامیابی کے ساتھ اختتام پذیر ہوگیا ہے۔ وزیر بلدیات ذیشان رفیق عید سے پہلے اور عید کی چھٹیوں کے دوران سخت گرمی میں فیلڈ میں مسلسل متحرک رہے۔ انہوں نے نہ صرف صوبائی دارالحکومت بلکہ متعدد اضلاع کے دورے کر کے الائشوں کو ٹھکانے لگانے کے کام کا خود معائنہ کیا۔ پہلی دفعہ لاہور میں سیف سٹی کے کیمروں کے ذریعے صفائی انتظامات کی نگرانی کی گئی جبکہ کینال میں آلائشیں پھینکنے پر دفعہ 144 کے تحت پابندی کو ڈرون کیمروں کے ذریعے موثر بنایا گیا۔ عید کے پہلے روز وزیر بلدیات ذیشان رفیق اور وزیراعلی کے معاون خصوصی برائے سیاسی امور ذیشان ملک نے لاہور کے مختلف علاقوں کا دورہ کیا۔ کمشنر زید بن مقصود، ڈپٹی کمشنر رافعہ حیدر اور چیف آفیسر میٹروپولیٹن کارپوریشن علی عباس بخاری بھی ان کے ساتھ تھے۔ سب سے پہلے انہوں نے قربان لائنز میں سیف سٹی اتھارٹی کا دورہ کر کے لاہور کے مختلف علاقوں کی مانیٹرنگ کا عمل سکرینوں پر دیکھا۔ ایس پی سیف سٹی محمد شفیق نے صوبائی وزیر کو انتظامات پر بریفنگ دی۔ وزیر بلدیات نے کہا کہ وزیراعلی مریم نواز شریف کی ہدایت کے مطابق کولیکشن پوائنٹس کی مسلسل نگرانی کی گئی۔ شہر میں الائشوں کو ٹھکانے لگانے کا کام بلاتعطل جاری رہا۔ انہوں نے کہا کہ ریلوے پٹڑیوں کی جانب خصوصی توجہ دی گئی۔ اگلے مرحلے میں صوبائی وزیر اور معاون خصوصی لبرٹی سکوائر گئے جہاں پر انہوں نے لاہور ویسٹ مینجمنٹ کمپنی کے صفائی آگاہی کیمپ کا معائنہ کیا اور سٹاف کو عید کے گفٹ دیے۔ انہوں نے قذافی سٹیڈیم کولیکشن پوائنٹ کا بھی دورہ کیا جہاں انہیں ڈپٹی کمشنر نے بریفنگ دی۔ صوبائی وزیر ذیشان رفیق نے کہا کہ الحمدللہ صفائی پلان کے عین مطابق کام کر رہا ہے۔ یہ سب ٹیم ورک کا نتیجہ ہے۔ صرف لاہور میں چودہ لاکھ سے زیادہ ماحول دوست بیگ تقسیم کئے گئے۔ ذیشان رفیق نے کہا کہ کسی بھی شکایت پر 30 منٹ کے اندر ایکشن لیا جا رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ اس دفعہ غیرقانونی مویشی منڈیوں کی سختی سے حوصلہ شکنی کی گئی جس کے باعث ٹریفک کی بدنظمی جیسے مسائل پیدا نہیں ہوئے۔ صرف سرکاری سیل پوائنٹس پر نو پرافٹ نو لاس کی بنیاد پر خدمات مہیا کی گئیں۔ معاون خصوصی ذیشان ملک نے کہا کہ وزیراعلی کی نگرانی میں پچھلے سال سے زیادہ بہتر کام ہو رہا ہے۔ مریم نواز شریف کے ستھرا پنجاب ویژن کے مطابق صفائی کا کام مسلسل جاری ہے۔ معاون خصوصی نے کہا کہ سخت گرمی میں عوام کو سہولیات فراہم کرنے والے ورکر ہمارے ہیروز ہیں۔ بعدازاں وزیر بلدیات ذیشان رفیق اور وزیراعلی کے معاون خصوصی ذیشان ملک نے ساندہ میں قائم کئے گئے محکمہ لوکل گورنمنٹ کے صوبائی عید کنٹرول روم کا دورہ کیا۔ سیکرٹری بلدیات شکیل احمد، کمشنر لاہور، ڈپٹی کمشنر، سیکرٹری ایل جی بورڈ رضوان نذیر بھی موجود تھے۔ انہوں نے پنجاب بھر میں جاری عید صفائی آپریشن کا جائزہ لیا اور بذریعہ ویڈیو لنک اجلاس میں تمام چیف آفیسرز کو ہدایات جاری کیں۔ دریں اثنا صوبائی وزیر اور معاون خصوصی نے ایل ڈبلیو ایم سی میں قائم کنٹرول روم کا بھی دورہ کیا۔ ذیشان رفیق نے اس بات پر اطمینان کا اظہار کیا کہ پورے پنجاب میں وزیراعلی کے ستھرا پنجاب ویژن کے مطابق کام ہو رہا ہے۔ محکمہ لوکل گورنمنٹ کی جانب سے صوبہ بھر میں آلائشیں ڈالنے کے لئے 32 لاکھ سے زیادہ ماحول دوست بیگ تقسیم کئے گئے۔ انہوں نے چیف آفیسرز کو ہدایت کی کہ ہر علاقے میں جتنی شکایات موصول ہو رہی ہیں وہ کنٹرول آفس کو رپورٹ کریں۔ اور سری پائے سر راہ جلانے پر دفعہ 144 کے تحت پابندی پر عملدرآمد یقینی بنایا جائے۔ انہوں نے کہا کہ پنجاب کی تاریخ میں آلائشیں اٹھانے کا کام تیز ترین اور موثر انداز میں جاری ہے۔ اضلاع میں فوکل پرسنز جاری کی گئی ہدایات کے مطابق کام کریں۔ ایل ڈبلیو ایم سی نے اچھی کارکردگی کا مظاہرہ کیا۔ اس موقع پر معاون خصوصی ذیشان ملک نے کہا کہ صفائی کے معاملے میں کوئی سستی برداشت نہیں کی جائے گی۔ ستھرا پنجاب پروگرام کے تحت عید پر کام ہوتا نظر آ رہا ہے۔ سخت گرمی اور حبس میں عوام کو سہولیات فراہم کرنے کی ہر ممکن کوشش ہو رہی ہے۔وزیر بلدیات ذیشان رفیق عید کے دوسرے روز بھی صفائی انتظامات کا جائزہ لینے میں مصروف رہے۔ انہوں نے لاہور کے علاقوں برکت مارکیٹ، اللہ ہو چوک، جوہر ٹاؤن اور اڈہ پلاٹ، رائے ونڈ میں قائم کئے گئے کولیکشن پوائنٹس کے دورے کئے اور عملہ صفائی میں مٹھائی، لنچ بکس اور عیدی تقسیم کی۔ وزیر بلدیات نے کام میں مصروف ورکرز کو دیے گئے کھانے کا معیار بھی چیک کیا۔ کمشنر زید بن مقصود اور ڈپٹی کمشنر بھی ساتھ تھیں۔ لاہور ویسٹ مینجمنٹ کمپنی کے سی ای او بابر صاحب دین نے انتظامات پر بریفنگ دی۔ ذیشان رفیق نے کہا کہ عید کے پہلے روز صرف لاہور سے 16 ہزار ٹن الائشیں اٹھائی گئیں۔ وزیراعلی مریم نواز کی زیر نگرانی 72 گھنٹے تک عید آپریشن جاری رہے گا۔ وزیراعلی کی شاباش سے ہم سب کے حوصلے بلند ہوئے۔ عوام کی توقعات پر پورا اترنے کی ہر ممکن کوشش کر رہے ہیں۔وزیر بلدیات نے عید کے دوسرے روز شیخوپورہ، گوجرانوالہ، وزیرآباد، گجرات، سمبڑیال اور ڈسکہ کے بھی دورے کئے اور صفائی آپریشن پر اطمینان کا اظہار کیا تاہم وزیر بلدیات ذیشان رفیق نے وزیر آباد میونسپل کمیٹی کی کارکردگی پر عدم اطمینان کرتے ہوئے عید کے لئے طے کئے گئے ایس او پیز پر عملدرآمد نہ ہونے پر برہمی کا اظہار کیا۔ چیف آفیسر بلدیہ وزیرآباد عید کے ایس او پیز پر عملدرآمد نہ ہونے کی وضاحت نہ کرسکے جس پر چیف آفیسر وزیرآباد اور سینٹری انسپکٹر کو معطل کر دیا گیا۔ ذیشان رفیق نے واضح کیا کہ ستھرا پنجاب وزیراعلیٰ مریم نواز شریف کا فوکس ہے۔ اس میں کوئی نرمی نہیں ہوگی۔ عوام کو سہولیات فراہم کرنے میں سستی اور غفلت برداشت نہیں کی جائے گی۔ عید کے آخری روز انہوں نے سیالکوٹ ویسٹ مینجمنٹ کمپنی اور لاہور ویسٹ مینجمنٹ کمپنی کا دورہ کیا اور عید صفائی آپریشن کے اختتام کا عمل دیکھا۔

پاکستان میں پہلا "ماں کے دودھ کا ڈونر بینک”،علماء کرام نے کی مخالفت

بااثر وڈیرے کے ظلم کا شکار اونٹ کراچی منتقل،مصنوعی ٹانگ لگائی جائے گی

گورنر سندھ کا مبینہ بااثر وڈیرے کے ظلم کا شکار شخص کو 2 اونٹ دینے کا اعلان

سانگھڑ، کھیت میں داخل ہونے پر وڈیرے نے اونٹ کی ٹانگ کاٹ دی

جبری مشقت بارے آگاہی،انٹرنیشنل لیبر آرگنائزیشن کی لاہور میں میڈیا ورکشاپ

بہت ہو گیا،طوائفوں کی ٹیم، محسن نقوی ایک اور عہدے کے‌خواہشمند

قومی اسمبلی،غیر قانونی بھرتیوں پر سپیکر کا بڑا ایکشن،دباؤ قبول کرنے سے انکار

سماعت سے محروم بچوں کے والدین گھبرائیں مت،آپ کا بچہ یقینا سنے گا

حاجرہ خان کی کتاب کا صفحہ سوشل میڈیا پر وائرل،انتہائی شرمناک الزام

جمخانہ کلب میں مبینہ زیادتی،عظمیٰ تو پرانی کھلاڑی نکلی،کب سے کر رہی ہے "دھندہ

گائے کے ساتھ جنسی زیادتی کی ویڈیو وائرل،ملزم گرفتار،بکری اورکتے بھی بنے نشانہ

Leave a reply