fbpx

یورپی یونین کا یوکرین کے ساتھ سیٹلائٹ انٹیلی جنس شیئر کرنے کا فیصلہ:روس غُصے میں آگیا

برسلز:یورپی یونین کا یوکرین کے ساتھ سیٹلائٹ انٹیلی جنس شیئر کرنے کا فیصلہ:روس غُصے میں آگیا ،اطلاعات کے مطابق یورپی یونین نے یوکرین کے ساتھ سیٹلائٹ انٹیلی جنس شیئر کرنے کا فیصلہ کرلیا ۔دوسری طرف روس یورپی یونین کے اس فیصلے کی شدید مذمت کی ہے

روسی میڈیا کی رپورٹ کے مطابق یورپی یونین نے یوکرین کے ساتھ ایک معاہدے کی منظوری دی ہے جس کے تحت وہ کیف کو خفیہ معلومات فراہم کر سکیں گے۔میڈیا رپورٹ میں میں کہا گیا ہے کہ انٹیلی جنس شیئر نگ میں سیٹلائٹ تصاویر شیئر کی جائیں گی۔

رپورٹ کے مطابق یورپی یونین کے سفیروں کو گزشتہ روز ایک میٹنگ کے دوران اس بارے میں آگاہ کیا گیا ہے۔ معاہدہ ایک سال تک جاری رہے گا اور ضرورت پڑنے پر اس کی تجدید کی جا سکتی ہے۔

تاہم یہ بات واضح نہیں ہے کہ آیا یہ معاہدہ صرف یورپی یونین کے ارکان کی اپنی انٹیلی جنس کا احاطہ کرے گا یا انہیں امریکا جیسے کسی تیسرے فریق سے موصول ہونے والی معلومات بھی شیئر کرنے کی اجازت دے گا۔

واضح رہے کہ یورپی یونین روس کے خلاف جنگ میں یوکرین کی حمایت کر رہی ہے۔

مغربی ممالک نے روس کے خلاف سخت اقتصادی پابندیاں عائد کر رکھی ہیں لیکن یوکرین کے تحفظ کے لیے فوجی طاقت کے استعمال سے انکار کر دیا ہے۔

یوکرین کے صدر ولادیمیر زیلنسکی نے یوکرین پر حملہ کرنے والے روسی جنگی طیاروں کو مار گرانے سے انکار کرنے پر نیٹو کو شدید تنقید کا نشانہ بنایا ہے۔

امریکی قیادت والے اتحاد نے یہ کہہ کر یوکرین کی فوجی امداد سے انکار کردیا کہ وہ اس تنازعے کو عالمی جنگ میں تبدیل کرنے کا خطرہ مول نہیں لینا چاہتے۔