ایف بی آر کی پی او ایس کےتحت پہلی قرعہ اندازی،انعام جیتنے والے خوش نصیبوں میں ایف بی آر افسران بھی شامل

0
120

اسلام آباد: فیڈرل بورڈآف ریونیو (ایف بی آر) کی جانب سے پی اوایس سسٹم پرانعامات دینے کا آغاز کر دیا گیا ہے۔

باغی ٹی وی: گزشتہ سال دسمبر میں فیڈرل بورڈ آف ریونیو(ایف بی آر)نے پوائنٹ آف سیل سسٹم(پی او ایس)سے منسلک ریٹیلرز سے خریداری پر انعامی سکیم کا اعلان کیا تھا ایف بی آر کا کہنا تھا کہ پوائنٹ آف سیل سسٹم(پی او ایس)سے منسلک ریٹیلرز سے خریداری پر پہلا انعام 10 لاکھ روپے کا ہوگا، 5 لاکھ روپے کے 2 اور اڑھائی لاکھ روپے کے 4 انعامات ہوں گے جبکہ50 ہزار روپے کے ایک ہزار انعامات دیئے جائیں گے۔

ایف بی آر کا پی او ایس ریٹیلرز سے خریداری پر انعامی سکیم کا اعلان

ترجمان ایف بی آر کا کہنا تھا کہ پوائنٹ آف سیل کے 5 کروڑ 30 لاکھ روپے کے انعامات ہر ماہ قرعہ اندازی کے ذریعے دیئے جائیں گے پہلی قرعہ اندازی 15 جنوری کو ایف بی آر ہیڈ کوارٹرز اسلام آبادمیں ہو گی دسمبر2021 میں پی او ایس سے منسلک ریٹیلرز سے خریداری کرنے والے قرعہ اندازی میں شامل ہوں گے۔

تاہم اب ایف بی آر کی جانب سے پی اوایس سسٹم پرانعامات دینے کا آغا کر دیا گیا ہے۔

ایف بی آرنے پہلی کمپیوٹرائزڈ قرعہ اندازی میں 5 کروڑ 30 لاکھ روپے کے انعامات جیتنے والوں کے اعلانات کر دیے ہیں، انعامی رقم سے نان فائلرسے 40 فیصد اور فائلر سے20 فیصد ودہولڈنگ ٹیکس کی کٹوتی ہو گی۔

ایف بی آرکی جانب سے پی اوایس سسٹم پرانعامات دینے سے متعلق اسلام آبادمیں تقریب کا انعقاد کیا گیا۔ٹیئرون ریٹیل آؤٹ لیٹس سے خریداری کرنے پرانعامی سکیم کا آغازکیا گیا ہے انعامی اسکیم کیلئے کمپیوٹرائزڈ قرعہ اندازی ہرماہ کی15تاریخ کو ہو گی،ابتدائی طورپرانعامات مالیت 10 لاکھ روپے کا پہلا انعام تنویر احمد کا نکلا جبکہ دوسرا انعام فرحان اکرام اور آفتاب احمد کا 5 لاکھ روپے کا نکلا۔

پابندی کے باوجود فیڈرل بورڈ آف ریونیو کی جانب سے پوائنٹ آف سیل پر انعامات کیلیے کی جانے والی قرعہ اندازی میں انعام جیتنے والے خوش نصیبوں میں فیڈرل بورڈآف ریونیو کے افسران بھی شامل ہیں۔

ذرائع کے مطابق گزشتہ روزایف بی آر ہیڈکوارٹرمیں ہونے والی قرعہ اندازی میں ایف بی آرکے بعض افسران کے بھی نام نکلے ہیں اس کے علاوہ ایڈورٹائزنگ ایجنسیوں سے منسلک حکام کے نام بھی شامل ہیں۔

گینگ ریپ میں نامزد اشتہاری ملزم 6 سال بعد گرفتار

ترجمان نے بتایاکہ فیڈرل بورڈ آف ریونیوکے صرف گریڈبیس اوراس سے اوپر کے افسران کیلئے اس انعامی اسکیم میں شمولیت پر پابندی عائد کی گئی تھی باقی ملازمین و افسران پر کوئی پابندی نہیں تھی یہ انعامی اسکیم صاف و شفاف ہے اور میڈیا کے سامنے کمپیوٹررائزڈ قرعہ اندازی کی گئی۔

دوسری جانب چیئرمین ایف بی آر اشفاق احمد کا کہنا ہے کہ جو فراڈ کریں گے ان کوبندکریں گے کاروبارنہیں کرنے دیں گے ملک بھر میں 3 ہزار رٹیلرز اور چین اسٹورز پی او ایس نصب کرکے ایف بی آر کے سسٹم سے منسلک ہوچکے ہیں،ملک میں ٹیکس وصولی آٹومیشن کے ذریعے کررہے ہیں،آٹومیشن سے ٹیکس چوری میں کمی ہوسکتی ہے-

چیئرمین ریڈ کریسنٹ ابرارالحق اپنی این جی او "سہارا” کےلیےفنڈریزنگ کرنے لگے

Leave a reply