مشکل ترین حالات میں پاکستان معاشی طورسنبھل رہاہے:آئی ایم ایف نے پاکستان کا قرض پروگرام بحال کردیا

اسلام آباد:مشکل ترین حالات میں پاکستان معاشی طورسنبھل رہاہے:آئی ایم ایف نے پاکستان کا قرض پروگرام بحال کردیا،اطلاعات کے مطابق بجلی کے ریٹ بڑھانے پر ڈیڈ لاک ختم ہو گیا، پاکستان کی طرف سے آئی ایم ایف کے تمام مطالبات تسلیم کر لیے گئے، ادارہ جاتی اصلاحات پر عملدرآمد کی یقین دہانی کے بعد پاکستان کو پچاس کروڑ ڈالر کی قسط ملنے کی راہ سے تمام رکاوٹیں دورہو گئیں۔ آئی ایم ایف نے پاکستان کا قرض پروگرام بحال کردیا۔

تفصیلات کے مطابق آئی ایم ایف اورپاکستان میں درمیان چھ ارب ڈالر کے قرضے کے جائزہ امور پر مذاکرات مکمل ہو گئے۔ آئی ایف ایم ایکسٹنڈڈ فنڈ فیسلیٹی کے تحت دوسرے سے پانچویں کے جائزے کے امور نمٹائے گئے۔

مذاکرات کے بعد پاکستان کو 500 ملین ڈالر کی قسط کے اجرا کی راہ ہموار ہو گئی۔ کورونا وبا کے باعث آئی ایم ایف کے ساتھ قرضے کے جائزہ امور تعطل کے شکار ہوئے تھے پاکستان اورآئی ایم ایف حکام میں ورچول جائزہ بات چیت کی گئی۔

آئی ایم ایف نے پاکستان کو 39مہینوں کے پروگرام کے تحت 6 ارب ڈالرکا قرضہ دینے کااعلان کیا تھا قرضہ کی 500ملین ڈالر کی حتمی منظوری آئی ایم ایف ایگزیکٹیو بورڈ دے گا۔

آئی ایم ایف اعلامیہ کے مطابق رواں مالی سال کے دوران پاکستان کی معیشت1.5فیصدتک رہے گی، کورونا کی دوسری لہر کے اثرات دنیا بھر کے معیشتوں پر مرتب ہورہے ہیں۔ پاکستان کے زرمبالہ کے ذخائر جنوری میں 13ارب ڈالر ریکارڈ کیے گئے، پاکستان نے ایف اے ٹی ایف کے حوالے سے نمایاں پیش رفت کی ہے۔

ذرائع کے مطابق بجلی کے ریٹ بڑھانے پر ڈیڈ لاک ختم ہو گیا، پاکستان کی طرف سے آئی ایم ایف کے تمام مطالبات تسلیم کر لیے گئے، ادارہ جاتی اصلاحات پر عملدرآمد کی یقین دہانی کے بعد پاکستان کو پچاس کروڑ ڈالر کی قسط ملنے کی راہ سے تمام رکاوٹیں دورہو گئیں جس کے باعث آئی ایم ایف نے پاکستان کا قرض پروگرام بحال کردیا

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.